fbpx

شناختی کارڈ کے اجرا میں ڈی این اے کو لازمی قراردیا گیا

کوئٹہ: قومی شناختی کارڈ کے اجرا میں ڈی این اے کو لازمی قرار دے دیا گیا-

باغی ٹی وی: بلوچستان اسمبلی نےقومی شناختی کارڈ کےاجرا میں ڈی این اے کو لازمی قراردینے سےمتعلق قرارداد منظور کرلی بلوچستان اسمبلی کا اجلاس قائم مقام اسپیکر سرداربابرموسیٰ خیل کی زیرصدارت 2 گھنٹے کی تاخیر سے منعقد ہوا-

پی آئی اے نے استنبول فضائی آپریشن شروع کر دیا

اجلاس میں پارلیمانی سیکرٹری بشریٰ رند نے قومی شناختی کارڈ کے اجرا میں ڈی این اے کو لازمی قراردینے سے متعلق قرارداد پیش کی جسے ایوان نے متفقہ طور پر منظور کرلیا۔

بلوچستان اسمبلی کے اجلاس میں پارلیمانی سیکرٹری بشریٰ رند نے قراردپیش کی کہ نیشنل ڈیٹا بیس اینڈ رجسٹریشن اتھارٹی جو ملک کے شہریوں کو کمپیوٹرائزڈ شناختی کارڈ جاری کرتی ہے جس میں مختلف سیکورٹی فیچرز ہیں لیکن اس میں ڈی این اے ٹیسٹ شامل نہیں کیاگیاہے جس کی وجہ سے جرائم پیشہ اور ملک دشمن عناصر کی شناخت میں مشکلات کاسامنا کرناپڑرہاہے –

پنجاب و خیبرپختونخوا صارفین کیلیے گیس مزید مہنگی ہونے کا امکان

چونکہ قومی شناختی کارڈ میں ہرفرد کا مکمل ڈیٹا ہونا از حد لازمی ہے لہٰذا یہ ایوان صوبائی حکومت سے سفارش کرتاہے کہ وہ وفاقی حکومت سے رجوع کرے کہ وہ ملک میں سیکورٹی کو مزید سخت کرنے کی بابت قومی شناختی کارڈ کے اجراء کی بابت ڈی این اے ٹیسٹ کو لازمی قراردینے کیلئے عملی اقدامات اٹھانے کو یقینی بنائے ۔

بلوچستان اسمبلی نے پارٹنر شپ بلوچستان، تنازعات کا متبادل حل ، بلوچستان ورکرز کمپنسیشن ، بلوچستان آکوپیشنل سیفٹی اینڈ ہیلتھ اور بلوچستان کمرشل کورٹس کے مسودہ قانون منظور کرلیے، یہ مسودات قوانین قائمہ کمیٹیوں سے منظور ہوچکے ہیں۔

دفاعی نمائش ’آئیڈیاز 2022‘ آج سے کراچی ایکسپو سینٹر میں شروع