مولانا فضل الرحمن کولاہورسےالیکشن لڑانے کی نوازشریف کی گیم کا انکشاف:ن لیگی ممبران نے مزاحمت کا تاثردے دیا

اسلام آباد : مولانا فضل الرحمن کولاہورسےالیکشن لڑانے کی نوازشریف کی گیم کا انکشاف:ن لیگی ممبران نے مزاحمت کا تاثردے دیا ،اطلاعات کے مطابق نوازشریف نے شاہد خاقان عباسی کی طرح مولانا فضل الرحمن کو لاہور سے الیکشن لڑوا کرقومی اسمبلی میں بھیجنے کا منصوبہ بنا لیا ہے ،

یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ اس حوالے سے مسلم لیگ ن لاہور سے اپنے کسی مضبوط حلقہ سے ایم این اے کا استعفیٰ لے کر وہاں مولانا فضل الرحمان کو ضمنی الیکشن لڑواکر قومی اسمبلی میں بھیج سکتی ہے ، جس کے بعد وہ اپوزیشن کے مشترکہ امیدوار برائے وزیر اعظم ہوں گے ، سینئر تجزیہ کار عمران یعقوب خان کی طرف سے یہ دعویٰ کیا گیا۔

سینئر تجزیہ کار عمران یعقوب خان کہ مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف ، سابق صدر آصف علی زرداری اور پی ڈی ایم سربراہ مولانا فضل الرحمان کے درمیان جو ٹیلیفونک رابطے ہوئے ہیں ، ان میں نواز شریف کی جانب سے ایک نئی ڈیل دی گئی ہے ، نوازشریف نے سابق صدر آصف زرداری سے یہ کہا ہے کہ اگر آپ ان ہاوس تبدیلی لاسکتے ہیں تو اس میں مولانا فضل الرحمان کو بطور پی ڈی ایم سربراہ ایڈجسٹ کیا جائے گا۔

سینئر تجزیہ کار کے مطابق سابق وزیر اعظ نواز شریف نے کہا ہے کہ مسلم لیگ ن یہ بھی کرسکتی ہے کہ لاہور سے اپنے کسی مضبوط حلقہ سے رکن قومی اسمبلی کا استعفیٰ لے کر وہاں مولانا فضل الرحمان کو ضمنی الیکشن لڑواکر قومی اسمبلی میں بھیجا جائے ، جس کے بعد وہ پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ کے مشترکہ امیدوار برائے وزیر اعظم کے طور پر سامنے آئی

دوسری طرف یہ بھی اطلاعات ہیں کہ ن لیگ کا کوئی بھی ممبر ان حالات میں مولانا کے لیےاستعفیٰ دے کرسیٹ خالی کرنے کے لیے تیارنہیں اوریہ بھی سننے میں آیا ہے کہ اگرایسی کوئی کیفیت ہوئی تو ن لیگ لاہور میں بھی ٹوٹ پھوٹ کا شکارہوجائے گی جو کہ ن لیگ کا مرکز تصور کیا جاتا ہے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.