نواز شریف کی ضمانت کی درخواست کیوں مسترد ہوئی؟ تفصیلی فیصلہ جاری

سابق وزیراعظم نواز شریف کی طبی بنیادوں پر ضمانت کی درخواست مسترد ہونے کا تفصیلی فیصلہ عدالت نے جاری کر دیا

نواز شریف سے ملاقات کا دن، کتنے افراد کو ملی اجازت؟

نواز شریف کو اڈیالہ جیل میں ہوا تھا تیسرا ہارٹ اٹیک ،مریم نواز نے کیا پریس کانفرنس میں انکشاف

نواز شریف کی طبیعت خراب، جیل حکام نےایسا فیصلہ کیا کہ ن لیگی پریشان ہو گئے

شہباز شریف نے قومی اسمبلی میں کی نواز شریف کی مخالفت، اہم خبر

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی نے تفصٰیلی فیصلہ جاری کیا ،اسلام آباد ہائی کورٹ نے سات صفحات پر مشتمل تفصیلی فیصلے میں وجوہات جاری کردیں ،فیصلے میں کہا گیا ہے کہ نواز شریف کو جیل میں تمام طبی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں ،سہولیات کی فراہمی کے بعد طبی بنیادوں پر ضمانت نہیں دی جاسکتی، فیصلے میں مزید کہا گیا ہے کہ سپرنٹنڈنٹ جیل اور نواز شریف نے کبھی میڈیکل بورڈ کی تشکیل کی استدعا نہیں کی،جیل حکام کے مطابق نواز شریف کی جان کو کوئی خطرہ نہیں،

 

واضح رہےنواز شریف کے مستقبل کا فیصلہ سنا دیا گیا

تحریک انصاف کا یوٹرن، نواز شریف کے قریبی ساتھی جو نیب ریڈار پر ہے بڑا عہدہ دے دیا

 

اسلام آباد ہائیکورٹ نے نواز شریف کی ضمانت کی درخواست مسترد کی تھی اس سے قبل سپریم کورٹ نے نواز شریف کو چھ ہفتوں کے لئے طبی بنیادوں پر رہا کیا تھا لیکن بعد ازاں ضمانت کی درخواست مٰیں توسیع نہیں کی تھی،

نواز شریف کوٹ لکھپت جیل مٰیں قید ہیں اور العزیز ریفرنس میں سات سال قید کی سزا مکمل کر رہے ہیں،

ڈاکٹرعدنان نواز شریف کا ذاتی معالج نہیں بلکہ…..شہباز گل نے کر دیا انکشاف

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.