fbpx

بھارت اور برطانیہ کے مابین نیا دفاعی معاہدہ:پاکستان کے لیے‌خطرے کی گھنٹی

لندن :بھارت اور برطانیہ کے مابین نیا دفاعی معاہدہ:پاکستان کے لیے‌خطرے کی گھنٹی،اطلاعات کے مطابق برطانوی وزیراعظم بورس جانسن نے اعلان کیا ہے کہ برطانیہ اور بھارت نئی اور وسیع دفاعی اور سکیورٹی شراکت داری پر رضامند ہو گئے ہیں۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن کا کہنا ہے کہ مطلق العنان جبر کے خطرات اور بھی بڑھ گئے ہیں۔ اس لیے یہ بہت ضروری ہے کہ ہم اپنے تعاون کو مزید بڑھائیں جس میں انڈو پیسیفک کو کھلا اور آزاد رکھنے میں ہماری مشترکہ دلچسپی بھی شامل ہے۔

برطانوی وزیراعظم کے دورہ بھارت پر بھارتی وزیراعظم کا کہنا تھا کہ یہ تاریخی بات ہے کہ بورس جانسن کا دورہ بھارت اس کی آزادی کے 75 ویں سال میں آیا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ہم نے کئی علاقائی اور بین الاقوامی پیش رفتوں پر تبادلہ خیال کیا اور ہند بحرالکاہل میں آزاد، جامع اور اصول پر مبنی نظم پر زور دیا۔ تاہم، دونوں ممالک کے درمیان سکیورٹی پارٹنرشپ کی صحیح تفصیلات فوری طور پر دستیاب نہیں ہو سکیں۔

اس تناظر میں برطانوی وزیراعظم کے دورہ بھارت سے متعلق خیال کیا جا رہا ہے کہ اس سے روس اور دہلی کے درمیان دوستانہ تعلقات میں کسی قسم کی تبدیلی نہیں آئے گی۔

خیال رہے، بھارت ایندھن اور فوجی ساز و سامان روس سے درآمد کرتا ہے۔ رواں ماہ کے آغاز میں روسی وزیر خارجہ سرگئی لاوروف کے دورہ بھارت سے قبل امریکی قومی سلامتی کے نائب مشیر دلیپ سنگھ اور برطانوی وزیر خارجہ لز ٹروس نے دہلی میں حکومتی عہدیداروں سے ملاقاتیں کی تھیں تاکہ بھارتی حکومت کو روس کے خلاف سخت مؤقف اپنانے کے لیے آمادہ کیا جا سکے۔

سال 2009 میں وزیراعظم کا منصب سنبھالنے کے بعد بورس جانسن کا یہ بھارت کا پہلا سرکاری دورہ ہے۔رواں ہفتے بورس جانسن کے ترجمان نے کہا تھا کہ نریندر مودی کے ساتھ ملاقات کے دوران دفاعی شعبوں میں نئی شراکت داری اور آزادانہ تجارت کے معاہدے پر بات چیت ہوگی۔

زبانی نکاح،پھر حق زوجیت ادا،پھر شادی سے انکار،خاتون پولیس اہلکار بھی ہوئی زیادتی کا شکار

10 سالہ بچے کے ساتھ مسجد کے حجرے میں برہنہ حالت میں امام مسجد گرفتار

بنی گالہ کے کتوں سے کھیلنے والی "فرح”رات کے اندھیرے میں برقع پہن کر ہوئی فرار

ڈیجیٹل میڈیا ونگ ختم،ملک میں جاری انتشار اب بند ہونا چاہیے،وفاقی وزیر اطلاعات

پارلیمنٹ لاجز میں صفائی کرنے والے لڑکے کو مؤذن بنا دیا گیا تھا،شگفتہ جمانی