fbpx

نیوزی لینڈ کے سابق کرکٹر کیرنز فالج کا بھی شکار ہو گئے

نیوزی لینڈ کے سابق کرکٹر کیرنز فالج کا بھی شکار ہو گئے

نیوزی لینڈ کے سابق آل راؤنڈر کرس کیرنز ہارٹ سرجری کے بعد فالج کا شکار ہو گئے ہیں

سڈنی میں کرس کیرنز کی ہارٹ سرجری ہوئی جس کے بعد انکی طبیعت میں بہتری کی خبریں آئی تھیں تا ہم اب خبر آئی ہے کہ کرس کیرنز کی ٹانگوں میں فالج ہو گیا ہے ،انکے دل کے بھی کئی آپریشن ہو چکے ہیں وہ سڈنی کے ہسپتال میں زیر علاج ہیں ، کیرنز کے وکیل ہارون لوئیڈ کا کہنا ہے کہ زندگی بچانے والی ایمرجنسی ہارٹ سرجری کے دوران کیرس کو سڈنی میں اس کی ریڑھ کی ہڈی میں فالج ہوا۔ اس کی وجہ سے اس کی ٹانگوں میں فالج ہوا

وکیل کا کہنا تھا کہ کیرس اور اس کا خاندان بے پناہ عوامی حمایت کا شکر گزار ہے کیونکہ وہ اس مشکل وقت سے نمٹ رہے ہیں۔ دعاؤں کا سلسلہ جاری رہنا چاہئے، ہسپتال میں کیرنز کی صحت کا مسلسل خیال رکھا جا رہا ہے اور وہ صحتیاب ہو رہے ہیں

کیرنز نے نیوزی لینڈ کے لیے 1989-2006 کے دوران 62 ٹیسٹ ، 215 ایک روزہ بین الاقوامی اور دو ٹوئنٹی میچ کھیلے۔ان کے والد لانس بھی نیوزی لینڈ کے لیے کرکٹ کھیلتے تھے۔کیرنز کئی سالوں سے اپنی بیوی اور بچوں کے ساتھ کینبرا میں مقیم ہیں۔

کرکٹ لیجنڈ کیلئے کرکٹ ستاروں اور سماجی رہنماؤ‌ں نے سوشل میڈیا پر اپنی نیک خواہشات کا اظہار کیا ہے. نیوزی لینڈ کے صحافی اینڈریو گورڈی نے اپنی ٹویٹ میں کہا ہے کہ آسٹریلیا سے ایک پریشان کن خبر ملی ہے، سابق بلیک کیپس آل راؤنڈر کرس کیرنز کو کینبرا میں ایک تشویشناک صورتحال کا سامنا کرنا پڑا ہے، وہ شدید بیمار ہے،