fbpx

نوبل انعام کیلئے نامزدگی پرخوشی ہے، ڈاکٹر امجد ثاقب

نوبل امن انعام 2022 کیلئے نامزد ہونے کے بعد اخوت کے بانی ڈاکٹر امجد ثاقب کا کہنا ہے کہ نوبل انعام کیلئے نامزدگی پرخوشی ہے،

نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر امجد ثاقب نے بتایا کہ قرض حسنہ کاپروگرام چند ہزارروپے سے شروع کیا تھا، ملک بھرسے 50ل اکھ افراد کوقرض حسنہ دیا گیا، ضرورت مندوں کو بغیرسود قرض حسنہ دیا جاتا ہے، رواں مالی سال 40ارب روپے بلا سود قرض حسنہ کا ہدف پورا ہو گا، سرمایہ دارانہ نظام نے لوگوں سے اعتماد چھین لیا ہے۔ نوبل انعام کیلئے نامزدگی پرخوشی ہے، کوئی بھی شخص اپنا نام خود نوبیل پرائزکیلئے نامزد نہیں کرسکتا، اخوت فلاح انسانیت کیلئے ایک مکمل نظام ہے ہم مکمل خود اعتمادی کے ساتھ لوگوں کوقرض حسنہ دیتے ہیں، اخوت اب تک 50لاکھ افراد کو مائیکرو فنانسنگ سے مستفید کر چکا، آج 162 ارب سے قرض حسنہ پروگرام سب سے بڑامنصوبہ بن گیا ہے، دیگرممالک میں بھی ہمارے ماڈل کواپنانے پرکام کیا جا رہا ہے،

اخوت کے بانی ڈاکٹرامجد ثاقب کو نوبل امن انعام 2022 کیلئے نامزد کر دیا گیا ہے یورپی ملک مالٹا کے وزیر خارجہ نے ڈاکٹر امجد ثاقب کو انسانیت کی خدمت اور انسداد غربت کے سلسلے میں نوبل امن انعام 2022 کے لئے نامزد کیا ہے

سابق گورنر پنجاب چودھری سرور کا کہنا ہے کہ اخوت کے بانی ڈاکٹر امجد ثاقب کو انسانیت کی خدمت کے لئے امن کے نوبل پرائز کے لئے نامزد کیا جانا پاکستانیوں کے لیے اعزاز کی بات ہے۔ ڈاکٹر امجد ثاقب جیسے لوگ معاشرے کا روشن چہرہ ہیں پاکستان کو ان پر ناز ہے

دوسروں کی عزت کی دھجکیاں اُڑاؤ ، پگڑیاں اچھالو تو احتساب ہو رہا ہے،مریم اورنگزیب

نواز شریف حاضر ہو، اسلام آباد ہائیکورٹ نے طلبی کی تاریخ دے دی

نواز شریف کی نئی میڈیکل رپورٹ عدالت میں جمع، نواز ذہنی دباؤ کا شکار،جہاز کا سفر خطرناک قرار

جس ڈاکٹر کا سرٹیفیکٹ لگایا وہ امریکہ میں اور نواز شریف لندن میں،عدالت کے ریمارکس

عدالت کو مطمئن نہ کیا گیا تو فرد جرم عائد ہوگی،رانا شمیم کو ملا آخری موقع