ورلڈ ہیڈر ایڈ

بے نامی اثاثے، کاروائی کا آغاز،ن لیگی سینیٹر کی چھ ہزار کنال زمین ضبط

بے نامی اثاثے ظاہر نہ کرنے والوں کے خلاف بڑا فیصلہ، مسلم لیگ ن کے سینیٹر چودھری تنویر کی راولپنڈی میں 6 ہزار کنال ضبط کر لی گئی

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق مسلم لیگ ن کے سینٹر چودھری تنویر کی چھ ہزار کنال بے نامی زمین منجمند کر دی ہے ،چودھری تنویر کی پراپرٹی منجمند کرنے کے احکامات کمشنر راولپنڈی نے جاری کئے ،مسلم لیگ ن کے سینیٹر چودھری تنویر کی یہ جائیداد چودھری تنویر کی جائیدادیں ان ملازمین کے نام تھی .

جن چھ افراد کے نام بے نامی جائیداد تھی ان کے نام ایف بی آر نے نوٹس جاری کر دئیے گئے ،جائیداد محمد بشارت ،راجا عبدالشکور، جہاں بیگم و دیگر کے نام پر تھی .

واضح رہے کہ ایمنسٹی سکیم کا آج اخری دن تھا، ایف بی آر نے اعلان کیا تھا کہ بے نامی اثاثے ظاہر نہ کئے جانے پر اثاثے ضبط کئے جائیں گے.

 

جس سکیم میں پارلیمان کو اعتماد میں نہیں لیا گیا،قوم کیسے اعتماد کرے، شیری رحمان

شبر زیدی کا کہنا ہے کہ جن شہریوں نے ابھی تک اپنے اثاثے ظاہر نہیں کئے وہ اثاثہ جات ظاہر کر لیں ، حکومت نے ٹیکس سسٹم میں نان فائلر کا تصور ختم کر دیا اور اب کسی کیلئے بھی ٹیکس کے دائرہ کار سے باہر رہنا ناممکن ہو جائیگا۔

بچوں کا مستقبل سنوارنا چاہتے ہیں تو یہ کام لازمی کریں، وزیراعظم کا قوم کو پیغام

ایمنسٹی سکیم کی منظوری وفاقی کابینہ نے دی تھی، صدر مملکت کے دستخط کے بعد اس سکیم کو ملک بھر میں اطلاق ہو گا. ایمنسٹی سکیم کے تحت بیرون ملک رہائش پذیر افراد بھی 6 فیصد ٹیکس ادا کرکے اپنے اثاثے ظاہرکرسکتے ہیں،پاکستان میں رہنے والے 4 فیصد ٹیکس ادا کر کے اثاثے ظاہر کر سکتے ہیں، ایمنسٹی اسکیم 30 جون 2019 کو ختم ہونی تھی لیکن اس میں تین دن کی توسیع کر دی گئی تھی، ایمنسٹی سکیم آج ختم ہو رہی ہے

ایمنسٹی سکیم کی منظوری پر پیپلز پارٹی اور ن لیگ نے شدید رد عمل ظاہر کرتے ہوئے کہا تھا کہ وزیر اعظم اپنے رشتے داروں کی دولت کے لئے یہ سکیم لے کر آئے ہیں.

1 تبصرہ
  1. SAAD کہتے ہیں

    Weldon.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.