fbpx

اوآئی سی کا کشمیر پر بھارت سے بڑا مطالبہ، پاکستان کا خیر مقدم

اوآئی سی کا کشمیر پر بھارت سے بڑا مطالبہ، پاکستان کا خیر مقدم

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی تعاون تنظیم کے انسانی حقوق کمیشن نے مسئلہ کشمیر پر اپنا اصولی موقف دہرا دیا،او آئی سی انسانی حقوق کمیشن نے مطالبہ کیا کہ کشمیریوں کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے تحت حق خودارادیت دیا جائے،بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیاں بند کرے،

کشمیر سے کرفیو اٹھا کرقیدیوں کو رہا کیا جائے، او آئی سی،پاکستان کا خیر مقدم

پاکستان نے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالیوں پر او آئی سی کے پہلے مذاکرے کو بھی سراہا، ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق او آئی سی مذاکرہ تنظیم کے 25 تا 28 نومبر کو 16ویں سیشن کے دوران ہوا،

او آئی سی انسانی حقوق کمیشن نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں کشمیریوں کی منظم نسل کشی اور قتل عام جاری ہے،بھارت کے 5 اگست کے اقدامات غیرقانونی ہیں،بھارت کی کشمیر میں انسانی حقوق کی بدترین پامالیوں کی تحقیقات کی جائیں،

کشمیریوں کے ساتھ کھڑے تھے ،ہیں اور رہیں گے، پاک فوج کا کشمیریوں‌ کو پیغام

‏اسرائیل کو تسلیم کرنے سے متعلق باتیں پروپیگنڈا ہے. ڈی جی آئی ایس پی آر

یہ سوچ بھی کیسے سکتے ہیں کہ کشمیر پر کسی قسم کی کوئی ڈیل ہوئی، ڈی جی آئی ایس پی آر

کشمیر کے لیے ‏‎آخری گولی،آخری سپاہی،آخری حد تک جائیں گے،ترجمان پاک فوج

بھارت سن لے، جنگیں اسلحہ سے نہیں جذبہ حب الوطنی سے لڑی جاتی ہیں، ترجمان پاک فوج

ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق او آئی سی انسانی حقوق کمیشن نے اقوام متحدہ اور عالمی برادری سے اپنا حقیقی کردار ادا کرنے پر زور دیا اور کہا کہ اقوام متحدہ اور عالمی برادری بھارت پر مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے دباؤ ڈالے