fbpx

عمر سرفراز چیمہ کا ایک بار پھر آئینی اداروں کے سربراہان سے اپیل کرنے کا فیصلہ

لاہور:عمر سرفراز چیمہ کا ایک بار پھر آئینی اداروں کے سربراہان سے اپیل کرنے کا فیصلہ ،اطلاعات کے مطابق پنجاب کے برطرف گورنرعمرسرفراز چیمہ نے ایک بارپھربڑا فیصلہ کیا ہے اوریہ بھی معلوم ہواہے کہ انہوں نےپنجاب کے آئینی بحران پر ایک بار پھر آئینی اداروں کے سربراہان سے اپیل کرنے کا فیصلہ کیا

اس حوالے سے معلوم ہوا ہے کہ عمرسرفراز چیمہ کا کہنا ہےکہ آئینی اداروں کے سربراہ پنجاب میں غیر آئینی اقدامات کے خلاف اپنا کردار ادا کریں ، اس حوالے سے بات کرتے ہوئے عمرسرفراز چیمہ کا کہنا تھا کہ پنجاب میں آئین اور قانون کو پامال کرکے حمزہ شہباز کو لایا گیا

عمرسرفراز چیمہ کا کہنا تھا کہ پنجاب میں ایسا عمل کیا گیا جیسا2007کو معزز جج صاحبان کو غیر آئینی طور پر فارغ کیا گیا، ان کا یہ بھی کہنا تھاکہ عدلیہ کی بحالی کے لیے عوام نکلے اس تحریک میں ہم نکلے تھے ، ان کا کہنا تھا کہ اب بھی ایسا نہ ہو کہ عوام باہر نکل آئیں

عمر سرفراز چیمہ کا کہنا تھا کہ آئینی اداروں نے اپنا کردار ادا نہ کیا تو عوام سخت ردعمل دے سکتے ہیں

یاد رہےکہ وزیراعظم شہباز کی طرف سے دومرتبہ گورنرپنجاب عمرسرفراز چیمہ کو بدلنے کی سمری بھیجی گئی تھی ، دونوں مرتبہ صدر نے یہ سمری مسترد کردی جس کے بعد وفاقی حکومت نے اسٹیبلشمنٹ ڈویزن کے ذریعے گورنرپنجاب کی برطرفی کا نوٹیفکیشن جاری کرکے ان کے گورنرہاوس میں داخلے پرپابندی لگا دی ہے ، جس کے بعد یہ بحران بہت زیادہ شدت اختیار کرگیا ہے