fbpx

عدالت کا دعا زہرا کیس کا تفتیشی افسر تبدیل کرنے کا حکم

کراچی :دعا زہرا کیس کا تفتیشی افسر تبدیل،اطلاعات کے مطابق کراچی کی ماتحت عدالت نے دعا زہرا کیس کا تفتیشی افسر تبدیل کرنے کا حکم دے دیا۔

ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ کراچی شرقی میں دعا زہرا کیس کے تفتیشی افسر کی تبدیلی سے متعلق درخواست پر سماعت ہوئی، دوران سماعت تفتیشی افسر پیش نہیں ہوئے۔

دعا زہرا کے والدین کے وکیل نے تفتیشی افسر کی تبدیلی کے لئے دلائل دیئے جب کہ استغاثہ نے موقف اختیار کیا کہ انہیں تفتیشی افسر کی تبدیلی پر کوئی اعتراض نہیں۔

عدالت نے فریقین کا موقف سننے کے بعد ڈی ایس پی شوکت شاہانی کی جگہ کسی دوسرے افسر کو تفتیشی افسر مقرر کرنے کا حکم دے دیا۔

دعا زہرا کے والدین کے وکیل جبران ناصر نے سماء ڈیجیٹل کو بتایا کہ عدالت نے تفتیشی افسر کی تبدیلی کے احکامات جاری کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ کسی اہل افسر کو مقرر کیا جائے جسے اس نوعیت کے کیسز کی تفتیش کا تجربہ ہو۔

دعا زہرا کی دارالامان منتقلی پر جبران ناصر کا کہنا تھا کہ والدین نے اپنی بیٹی حکومتی تحویل میں آنے پر سکھ کا سانس لیا ہے۔

مدعی کے وکیل نے کہا کہ دعا زہرا کی دارالامان منتقلی کی 2 ہی وجوہات ہوسکتی ہیں، یا تو اغوا کار کے لیے دعا زہرا ایک بوجھ بن گئی تھی یا پھر یہ اقدام عدالت کو گمراہ کرنے کی ایک سوچی سمجھی چال بھی ہوسکتی ہے۔

جبران ناصر نے حیرانی کا اظہار کیا کہ ایک 14 سے 15 سال کی لڑکی کو بھلا کیسے اس قدر عدالتی معاملات کی سوجھ بوجھ ہے کہ اسے کس عدالت میں کس وقت رجوع کرکے اپنے حق میں فیصلہ لینا ہے۔