fbpx

بارشوں کی وجہ سےریلوے کا ٹرین آپریشن متاثرہوا:سی اوپاکستان ریلویز فرخ تیمورغلزئی

لاہور:چیف ایگزیکٹو آفیسر پاکستان ریلویز فرخ تیمور غلزئی نے کہا ہے کہ ملک بھر میں جاری موسلادھار بارشوں سے پاکستان ریلویز کا ٹرین آپریشن شدید متاثر ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بارش کا یہ بے مثال سپیل ختم ہونے کے بعد ٹرینوں کی وقت کی پابندی معمول پر آجائے گی۔ سی ای او ریلوے نے کہا کہ کئی مقامات پر ٹریکس، یارڈز اور سگنلنگ سسٹم متاثر ہوئے تاہم پاکستان ریلویز کے عملے اور افسران نے اس بات کو یقینی بنایا کہ کوئی بھی ٹرین منسوخ نہ ہو جس کو سراہا جانا چاہیے، یہ بات انہوں نے ای کچری کے ذریعے عام لوگوں کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے کہی۔ .

فرخ نے کہا کہ ریلوے اب ٹیک آف کر رہا ہے اور سی پیک سے متعلق منصوبے محکمے میں مزید مثبت تبدیلی لائیں گے۔ ایک سوال کے جواب میں سی ای او نے کہا کہ ہماری ایجنسیوں کی طرف سے سیکیورٹی کلیئرنس ملتے ہی سبی-ہرنائی سیکشن کام شروع کر دے گا۔

مسافروں کو سہولیات کی فراہمی کے حوالے سے سی ای او ریلوے نے کہا کہ جلد ہی تمام ٹرینوں میں فاسٹ چارجنگ پورٹ نصب کر دی جائیں گی۔ سی ای او نے چند اسٹیشنوں پر صفائی کے ناقص انتظامات کی شکایات موصول ہونے پر برہمی کا اظہار کیا اور متعلقہ افسران کو 24 گھنٹے کے اندر شکایات کا ازالہ کرنے اور اس سلسلے میں ہیڈ کوارٹر کو رپورٹ بھیجنے کا حکم دیا۔

فرخ تیمور غلزئی نے ریلوے ملازمین پر واضح کیا کہ ای کچہری کا مقصد صرف اور صرف عوام کے مسائل حل کرنا ہے اور روزگار سے متعلق مسائل کو متعلقہ ڈویژن تک پہنچایا جائے۔

سٹاپ دینے کے بارے میں بات کرتے ہوئے چیف ایگزیکٹو آفیسر نے کہا کہ پاکستان ریلوے کی پالیسی کے مطابق ایک لاکھ روپے تک کی یومیہ آمدنی والے سٹیشنوں پر سٹاپ دیئے جاتے ہیں۔ ایک اور سوال کے جواب میں سی ای او نے کہا کہ ہمارے وسائل ہمیں فی الحال کوئی نئی ٹرین چلانے کی اجازت نہیں دیتے۔ تاہم نئی درآمد شدہ کوچز کے پاکستان پہنچنے کے بعد نئی ٹرینیں ضرور چلیں گی۔ ای کیچری میں دس ہزار سے زائد سوالات موصول ہوئے۔