پاکستانی ڈاکٹرز لائن آف کنٹرول پار کرنے کو تیار، دعاؤں کی اپیل

پاکستان کے مختلف علاقوں سے تعلق رکھنے والے ڈاکٹرز بغیر کسی حکومتی سرپرستی کے کشمیری بھائیوں کے علاج معالجے کیلئے لائن آف کنٹرول پار کرنے کیلئے مظفر آباد کے علاقے چکوٹھی پہنچ گئے، باغی ٹی وی کو وصول ہونے والی تفصیلات کیمطابق یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسسز کے وائس چانسلر ڈاکٹر جاوید اکرم کی سربراہی 29 ڈاکٹرز کا قافلہ اپنی مدد آپ کے تحت کشمیری بھائیوں کی مدد کیلئے مظفر اباد کے علاقے چکوٹھی پہنچ گیا اس قافلے میں تین لیڈی ڈاکٹرز بھی شامل ہیں ڈاکٹر جاوید اکرم کے مطابق چکوٹھی کے مقام پر تمام ڈاکٹرز کی طرف سے پہلے مطاہرہ کیا جائے گا مطاہرے کے بعد قانونی طریقے سے بھارتی حکام سے مقبوضہ کشمیر میں داخل ہونے کیلئے اجازت مانگی جائے گی اور اگر بھارتی حکام کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں علاج معالجے کی خاطر جانے کی درخواست رد کر دی گئی تو مظفر آباد واپس آ جائیں گے ، یادرہے کہ اس احتجاج و علاج معالجے کا اہتمام پاکستان سوسائٹی آف انٹرنل میڈیسن کی جانب سے کیا گیا ہے،

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.