فلسطینی مجاہدین کے میزائل حملے، اسرائیلی وزیراعظم بنکروں میں چھپ گئے

فلسطینی مجاہدین کی جانب سے عسقلان اور اسدود پر میزائل حملوں کے بعد اسرائیلی وزیراعظم بنجمن نیتن یاھو کو بھی بنکروں میں چھپنا پڑا۔

مرکز اطلاعات فلسطین کے مطابق غزہ سے فائر کیے گئے فلسطینیوں کے راکٹ حملوں کی وجہ سے عسقلان اور اسدود میں اسرائیلی بھاگنے اور زمین دوز بنکروں میں چھپنے پر مجبور ہو گئے۔

اسرائیلی ذرائع ابلاغ کی طرف سے ایک فوٹیج نشر کی گئی جس میں بتایا گیا ہے کہ غزہ سے 40 کلو میٹر کے فاصلے پر فلسطینیوں کے متعدد میزائل گرے۔ اس وقت اسرائیلی وزیراعظم بھی اس علاقے میںایک تقریب میں شریک تھے۔ میزائل حملوں کے بعد خطرے کے سائرن بجے اوراسرائیلی وزیراعظم کے سیکیورٹی عملے نے انہیں اپنے حصار میں لے کر ایک زمین دوز بنکر میں منتقل کردیا۔

مقامی وقت کے مطابق شام کے 9 بجے غزہ کے بالمقابل اسدود اور عسقلان میں متعدد میزائل گرے۔

یاد رہے کہ میزائل حملہ نیتن یاھو کی پریس کانفرنس کے چند گھنٹے بعد کیا گیا۔ پریس کانفرنس میں اسرائیلی وزیراعظم نے وادی اردن کو اسرائیل میں ضم کرنے کا اعلان کیا تھا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.