پلوامہ میں مجاہدین کی فوج کے ساتھ لڑائی شروع ہوتے ہیں، انٹرنیٹ معطل

پلوامہ مقبوضہ کشمیر میں مجاہدین کی فوج کے ساتھ لڑائی شروع ہوتے ہیں، انٹرنیٹ معطل

باغی ٹی وی رپورٹ کے مطابق ، پلوامہ میں مجاہدین اور بھارتی فوج کے درمیان جھڑپ شروع ہوتے ہی انٹرنیٹ‌ معطل کردیا گیا . مقبوضہ کشمیر کے علاقے پلوامہ میں بھارتی فورسز نے آپریشن کے دوران 3 کشمیری نوجوان مجاہدین کو شہید کردیا ہے۔ جبکہ ایک فوجی اہلکار شدید زخمی ہوگیا۔
ساوتھ ایشین وائر کے مطابق مقبوضہ کشمیرکے جنوبی ضلع پلوامہ کے علاقے کنگن میں فوج نے بدھ کے روز صبح بڑے پیمانے پر تلاشی کاروائی شروع کی جس کے ساتھ ہی ضلع میں ٹو جی موبائل انٹرنیٹ سروس کو بھی معطل کر دیا گیا ۔ ساوتھ ایشین وائر کے مطابق فوج کے 55 آر آر، سی ار پی ایف کے 183 بٹالین اور پولیس کی مشترکہ ٹیموں نے کنگن علاقہ کو محاصرے میں لے لیا اور گھر گھر تلاشی کاروائی شروع کر دی ۔
آپریشن کے دوران ضلع کے آستان محلہ کنگن علاقے میں عسکریت پسندوں اور بھارتی فوج کے مابین فائرنگ کا تبادلہ ہوا۔
اطلاعات کے مطابق فوج کو علاقہ میں عسکریت پسندوں کی موجودگی کے بارے میں ایک مصدقہ اطلاع ملی جس کے بعد کنگن سمیت متعدد علاقوں کو محاصرے میں لیا گیا ہے۔
ایک سینئر پولیس افسر نے مشترکہ ٹیم اور عسکریت پسندوں کے مابین فائرنگ کے تبادلے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ جیش محمد کے کے دو سے تین مجاہد یہاں موجود تھے اور آپریشن ابھی جاری ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.