پنکچر و ٹیوب کی قیمتیں ڈبل

قصور
لاک ڈاؤن کا فائدہ اٹھا کر پنکچر والے لوگوں کو لوٹنے لگے موٹر سائیکل کی ٹیوب 400 روپیہ میں جبکہ ایک پنکچر 100 روپیہ میں شہری پریشان
تفصیلات کے مطابق قصور اور گردونواح میں ٹائر و پنکچر شاپ والے لوگوں کو دونوں ہاتھوں سے لوٹنے لگے چونکہ لاک ڈاؤن ہے اور دکانیں بند ہیں ایسے میں سڑک کنارے پنکچر شاپ والے مجبور لوگوں کی مجبوری سے فائدہ اٹھا کر پہلے سے مفلس لوگوں کو لوٹنے لگے ہیں موٹر سائیکل پنکچر کی لگوائی 40 روپیہ سے بڑھا کر 100 روپیہ کر دی ہے اور موٹر سائیکل کی نئی ٹیوب 400 میں ڈالی جا رہی ہے جبکہ ٹیوب کے ریپر پر واغع طور پر قیمت 220 روپیہ لکھی ہوئی ہے اس بابت جب دکاندار سے پوچھا گیا تو اناس نے کہا کہ قصور شہر کے بڑے بڑے ہول سیل ڈیلروں کی دکانیں بند ہیں اور انہوں نے اپنی دکانوں سے سامان اپنے گھروں میں منتقل کر لیا ہے اور ہمیں من مانی قیمتوں پر چیزیں فروخت کر رہے ہیں لہذہ ہمیں پیچھے سے چیزیں مہنگی ملتی ہیں اس لئے ہم مجبور ہیں
لوگوں نے ڈی سی قصور ، اے سی قصور اور پرائس کنٹرول مجسٹریٹ سے کاروائی کا مطالبہ کیا ہے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.