پہلے بیرون ملک علاج کروانیوالے اب کیوں نہیں جا رہے ،کرونا نے کیا سکھایا؟ وزیراعظم نے بتا دیا

پہلے بیرون ملک علاج کروانیوالے اب کیوں نہیں جا رہے ،کرونا نے کیا سکھایا؟ وزیراعظم نے بتا دیا

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ قومیں خود پر اعتماد کرکے آگے جاتی ہیں

اسلام آباد میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ برطانیہ چھوٹا سا ملک لیکن دنیا پر حکمرانی کرتا رہا مدینہ کی ریاست کا نمونہ سب کے لیے بہترین مثال ہے،خود اعتمادی لوگوں کومشکلات سےنبردآزما ہونے کے قابل بناتی ہے،بدقسمتی سے ہم میں خود اعتمادی کی کمی رہی ،خود اعتمادی سے غلامانہ سوچ سے نکلا جاسکتا ہے ،شوکت خانم اسپتال بناتے وقت ہماری حوصلہ شکنی کی گئی،ہمیں کہا گیا اسپتال نہیں بن سکتا ،لیکن ہم نے خود اعتمادی سے بنا کر دکھایا،

وزیراعظم عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ ہم نے ماضی میں تعلیم اور ریسرچ پرپیسہ خرچ نہیں کیا ماضی میں ملکی پیداوار ی صلاحیت کو نظر انداز کیا جاتا رہا کورونا وائرس سے پہلے ہر شخص باہرعلاج کے لیے جاتا تھا،کوروناوائرس کے بعد سب ملک میں علاج کرارہے ہیں ،آج صاحب اقتدارچاہیں توبیرون ملک علاج نہیں کرا سکتے،ہر چیز کو بیرون ملک سے اپنے ملک کیسے لاسکتے ہیں؟ہمارے ملک میں پیداواری صلاحیت موجود ہے،جوملک نیوکلیئرہتھیاربناسکتا ہے اس کےلیے وینٹی لیٹربنانا مشکل ہے؟

وزیراعظم عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ 60کی دہائی میں ملک ترقی کی جانب گامزن تھا،ہمیں اپنے اسپتال درست کرنے ہیں،انہیں بہتربنانا ہے،جب تک وزرا سرکاری اسپتالوں میں علاج نہیں کرائیں گےاسپتال بہترنہیں ہوں گے، ڈیڑھ سال ملک کوڈیفالٹ سے بچانے میں گزر گیا ،لاک ڈاؤن کا اعلان کردیا گیا سوچا ہی نہیں گیا کہ دہاڑی دارکا کیابنے گا،قوم کوپورا ویژن دیں گے،یہ کسی چھوٹےطبقے کے لیے نہیں پورے ملک کیلیےہوگا مودی اتنا ڈرپوک نکلا کہ کورونا کی وجہ سے ملک بند کردیا،

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ کرونا وائرس پاکستان میں دو چیزیں سامنے لیکر آیا ہے کہ جو ملک ایٹم بم بناسکتا ہے وہ وینٹی لیٹر اور سینیٹائزر بھی بنا سکتا ہے ،دوسرا یہ کہ اشرافیہ چاہ کر بھی علاج کیلیے باہر نہیں جاسکتے، کرونا اگرغریبوں کی بستی میں پھیلے گا تو امیروں کی بستی میں بھی جائے گا،کروناوائرس نےسکھایا اپنے پاؤں پر کھڑاہونا ہے،

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.