fbpx

پی کے 7 سوات:پی ٹی آئی کے فضل مولاکامیاب ہو گئے

سوات: خیبرپختونخوا اسمبلی کے حلقہ 7 میں ضمنی الیکشن میں غیر حتمی اور غیر سرکاری نتیجہ کے مطابق پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے امیدوار فضل مولا کامیاب ہوگئے۔خیبر پختون خوا کے ضلع سوات میں پاکستان تحریک انصاف نے میدان مار کر 12 جماعتی اتحاد کو شکست سے دو چار کر دیا۔

 

ضمنی الیکشن،عمران خان کاحکومت کو ٹف ٹائم دینے کا فیصلہ ،اتوار کو دورہ لاہور

تفصیلات کے مطابق ضلع سوات کے انتخابی حلقے پی کے 7 پر ضمنی انتخاب میں پی ٹی آئی کے فضل مولا اور اے این پی کے حسین احمد خان سمیت 4 امیدوار اس نشست پر مد مقابل ہوئے۔

پی کے 7 کے 124پولنگ سٹیشنز کے غیر حتمی غیر سرکاری نتیجہ کے مطابق پی ٹی آئی کے فضل مولا 18 ہزار 42 ووٹ لیکر کامیاب قرار پائے جبکہ اے این پی کے حسین احمد 14 ہزار 665 ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔

عامر لیاقت کی سیٹ پر پی ٹی آئی کا امیدوار کون ہو گا؟ سابق گورنر سندھ نے بتا دیا

خیال رہے کہ یہ نشست اے این پی کے وقار خان کے انتقال کے باعث خالی ہوئی تھی، جس پر آج صبح 8 بجے پولنگ کا عمل شروع ہوا اور شام 5 بجے تک بغیر کسی وقفے کے جاری رہا۔

یہ نشست اے این پی کے ایم پی اے وقار احمد خان کی 30 اپریل کو حرکت قلب بند ہونے سے انتقال کے بعد خالی ہوئی تھی۔پی ٹی آئی کے حاجی فضل مولا، اے این پی کے حسین احمد خان، تحریک انقلاب پولیٹیکل موومنٹ کے دولت خان اور آزاد امیدوار محمد علی شاہ میدان میں ہیں۔

پی ٹی آئی کے علاوہ مرکزی دھارے کی سیاسی جماعتوں نے 2007-09 کی سوات کی شورش کے دوران مقتول کے خاندان کی قربانیوں کا حوالہ دیتے ہوئے الیکشن نہ لڑنے کا فیصلہ کیا تھا۔

پی کے 7 پی ٹی آئی کے مرکزی رہنما اور سابق وزیر مواصلات مراد سعید کا آبائی حلقہ ہے۔ اے این پی پہلے ہی صوبائی وزراء کی جانب سے پی ٹی آئی کے نامزد امیدوار کے لیے ‘سرگرم مہم’ کی شکایت کر چکی ہے۔

عدالت پارلیمنٹ کا احترام کرتی ہے لہذا پی ٹی آئی ایم این ایز اسپیکر سے رجوع کریں

الیکشن کمیشن آف پاکستان کے مطابق اس حلقے میں 183,308 رجسٹرڈ ووٹرز ہیں جن میں 102,088 مرد اور 81,220 خواتین شامل ہیں۔ پولنگ صبح 8 بجے شروع ہو کر شام 5 بجے تک جاری رہے گی۔ضمنی انتخاب کے لیے کل 124 پولنگ اسٹیشنز قائم کیے گئے ہیں۔ ان میں سے 41 کو حساس اور 12 کو حساس قرار دیا گیا ہے۔