fbpx

امریکی عوام جوبائیڈن کواگلےصدرکےطورپرنہیں دیکھنا چاہتے:سروے رپورٹ

نیویارک:امریکی عوام صدر جوبائیڈن کواگلے صدر کے طورپرنہیں دیکھنا چاہتے:سروے رپورٹ میں انکشاف ،اطلاعات کے مطابق امریکی عوام نے 2024 کےلیے جوبائیڈن کی بجائے اپنے اگلے صدر کے طور پر جوبائیڈن کی بجائے کسی اور پرامیدیں لگا لی ہیں، جمعرات کو جاری ہونے والے تازہ ترین نیوز نیشن/ڈیسیژن ڈیسک ہیڈکوارٹر پول کے مطابق ووٹرز نہیں چاہتے کہ صدر جو بائیڈن دوبارہ الیکشن لڑیں، لیکن وہ سابق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو ٹکٹ پر بھی نہیں دیکھنا چاہتے۔

سروے میں شامل تمام ووٹروں میں سے 60 فیصد سے زیادہ نے کہا کہ بائیڈن کو صدر کے لیے انتخاب نہیں لڑنا چاہیے۔ دی ہل نے رپورٹ کیا کہ ڈیموکریٹس میں سے 30 فیصد نے کہا کہ انہیں 2024 سے باہر بیٹھنا چاہیے۔اسی طرح کل ووٹروں میں سے تقریباً 57 فیصد نے کہا کہ ٹرمپ کو صدر کے لیے انتخاب نہیں لڑنا چاہیے۔ چھبیس فیصد رائے دہندگان ریپبلکن کسی اور کو بطور امیدوار چاہتے ہیں۔

ہل وائٹ ہاؤس کے کالم نگار نیل سٹینج نے کہا کہ یہ 2020 کے متنازعہ صدارتی انتخابات کی یادیں ہو سکتی ہیں جنہوں نے ووٹرز کو موجودہ اور سابق صدر دونوں سے دور کر دیا۔

کالم نگار کا کہنا ہے کہ "اس کا ایک حصہ، ایمانداری سے، مجھے لگتا ہے کہ اس انتخاب کی تلخی اور دشمنی کا تعلق ہے،” سٹینج نے مزید کہا، "مجھے شک ہے کہ وہاں بہت سارے ووٹرز ہیں، خاص طور پر درمیانی میدان میں یا زیادہ اعتدال پسند ووٹرز۔ ہر پارٹی، جو صرف یہ نہیں چاہتی کہ اس سارے عمل پر دوبارہ مقدمہ چلایا جائے کیونکہ یہ اتنا منقسم الیکشن تھا۔

ڈیموکریٹک اور ریپبلکن امیدواروں میں اگلے سب سے زیادہ مقبول نائب صدر ہیرس تھے، بالترتیب 16 فیصد، اور فلوریڈا کے گورنر رون ڈی سینٹیس، بالترتیب 23 فیصد تک رہی ہے

ڈیسک ہیڈکوارٹر کے سینئر ڈیٹا سائنسدان کیل ولیمز نے کہا، تاہم یہ بتانا بہت جلد ہے کہ انتخابات کیسے ہو سکتے ہیں۔ ولیمز نے کہا کہ یہ بھی ممکن ہے کہ وسط مدتی انتخابات سے چار ماہ بعد، بہت سے ممکنہ امیدوار ابھی تک گھریلو نام نہیں بن پائے ہیں۔ولیمز نے کہا ، "میرے خیال میں اس میں سے زیادہ تر رائے دہندگان میں صرف نام کی شناخت کی کمی ہے۔لیکن حقیقت یہ ہے کہ امریکی عوام اب جوبائیڈن کو صدر کے طورپرنہیں دیکھنا چاہتے