بھارتی وزیراعظم کے دورہ مقبوضہ کشمیر کے خلاف دنیا بھر میں احتجاجی مظاہرے اورریلیاں

0
60

مظفرآباد:بھارتی وزیراعظم کے دورہ مقبوضہ کشمیر کے خلاف دنیا بھر میں احتجاجی مظاہرے اورریلیاں ،اطلاعات کے مطابق بھارتی وزیراعظم نریندرہ مودی کے دورہ مقبوضہ جموں وکشمیر کے خلاف آزاد جموں و کشمیر کے مختلف اضلاع میں احتجاجی مظاہرے اورریلیاں نکالی جارہی ہیں۔

5اگست 2019 کو مقبوضہ جموںوکشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کے بعد یہ بھارتی وزیر اعظم نریندرمودی کامقبوضہ جموں وکشمیر کا پہلا دورہ ہے۔ مودی کے متنازعہ دورے کیخلاف آج صبح سے مظفرآباد میں پاسبان حریت کے زیر اہتمام دھرنا دیا گیا ہے۔ مودی مخالف دھرنے کی قیادت چیئرمین پاسبان حریت عزیراحمدغزالی،پیپلزپارٹی کے رہنما شوکت جاوید میر،عثمان علی ہاشم اور جاوید احمد مغل کررہے ہیں۔برہان وانی شہید چوک میں شہریوں کی بڑی تعداد مودی مخالف دھرنے میں شریک ہے۔دھرنے کے شرکاء نے ہاتھوں میں سیاہ پرچم اٹھائے ہیں اوروہ ”گو مودی گو بیک”کے نعرے لگارہے ہیں۔۔شرکاء نے کتبے اٹھا رکھے ہیں جن پر” مودی کو روک دو”،” جموں وکشمیر آزادی چاہتا ہے” کے نعرے درج ہیں۔

دریں اثناء کل جماعتی حریت کانفرنس کی آزادجموںوکشمیر شاخ کے رہنما عبدالمجید ملک نے بھارتی وزیراعظم کے دورہ مقبوضہ جموں کشمیر کو کشمیریوں کے زخموں پر نمک پاشی کے مترادف قرار دیا ہے۔ انہوں نے ایک بیان کہا کہ نریندر مودی عالمی برادری کی توجہ علاقے میں جاری انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں سے ہٹانا چاہتے ہیں لیکن وہ اپنے مذموم عزائم میں کامیاب نہیں ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیری عوام جموں و کشمیر پر بھارت کے غیر قانونی تسلط کو کبھی تسلیم نہیں کریں گے اور وہ جدوجہد آزادی کوہرقیمت پرجاری رکھیں گے۔

ادھربھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے دورہ مقبوضہ جموںو کشمیر کے خلاف کل جماعتی حریت کانفرنس کی آزادکشمیر شاخ کے زیر اہتمام اسلام آباد میں بھارتی ہائی کمیشن کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیاگیا۔

احتجاجی مظاہرے کی قیادت کل جماعتی حریت کانفرنس کی آزادکشمیر شاخ کے کنوینر محمد فاروق رحمانی نے کی جبکہ آزاد جموں و کشمیر کے وزیراعظم سردار تنویر الیاس تقریب کے مہمان خصوصی تھے۔احتجاجی مظاہرین نے آزادی اورپاکستان کے حق میں نعرے لگائے ۔

وزیراعظم آزاد جموں و کشمیر سردار تنویر الیاس نے مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی وزیراعظم کے دورہ مقبوضہ جموں و کشمیرکا مقصد اپنی فوج کا مورال بلند کرنا ہے جو جنگ ہارچکی ہے۔ انہوں نے کہاکہ ذہنی دبائو کے باعث کشمیر میں روزانہ بھارتی فوجی خودکشی کر رہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ بھارتی وزیراعظم کا دورہ کشمیر غیر اخلاقی اور غیر قانونی ہے کیونکہ بھارت 1947ء سے کشمیر پر قابض ہے۔

انہوں نے کہاکہ بھارتی وزیراعظم کے دورہ کشمیر کا مقصدعالمی برادری کو مقبوضہ جموںو کشمیر کی اصل صورتحال سے گمراہ کرنا ہے۔کل جماعتی حریت کانفرنس کی آزادکشمیر شاخ کے کنوینرمحمد فاروق رحمانی نے قابض بھارتی فورسز کی طرف سے کشمیریوں کے انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں پر شدید تشویش کا اظہار کیا۔واضح رہے کہ مودی کے دورہ مقبوضہ جموں وکشمیر سے قبل گزشتہ 48گھنٹے میں بھارتی فوج نے 6 کشمیریوں کو شہید کر دیا۔ بھارتی وزیر اعظم کے دورہ مقبوضہ کشمیر کے خلاف علاقے میں کل جماعتی حریت کانفرنس کی کال پر مکمل ہڑتال کی جارہی ہے۔

Leave a reply