پی ٹی آئی کو ڈونیشن کیسے آئی قانونی یا کسی اور طریقے سے؟ الیکشن کمیشن کا استفسار

0
41
ecpkhan

پی ٹی آئی کو ڈونیشن کیسے آئی قانونی یا کسی اور طریقے سے؟ الیکشن کمیشن کا استفسار

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق الیکشن کمیشن میں پی ٹی آئی فارن فنڈنگ کیس کی سماعت ہوئی

پی ٹی آئی فنانشل ایکسپرٹ نے الیکشن کمیشن کو بریفنگ دی، دوران بریفنگ چیف الیکشن کمشنر نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ ہم سمجھ رہے تھے کہ آپ اکاونٹس کی بات کریں گے،آپ تو اسکروٹنی کمیٹی کی رپورٹ پر بات کر رہے ہیں ہو سکتا ہے آ پ نے قانون پڑھا ہو ،فنانشنل ایکسپرٹ نے کہا کہ جو فنڈز ہمیں ملے ہیں ان کی تفصیل بھی پیش کروں گا،ممبر شب فیس اورامدادی رقم دو الگ چیزیں ہیں،ممبر سندھ نے استفسار کیا کہ ڈونیشن کیسے آئی قانونی یا کسی اور طریقے سے؟ ممبر بلوچستان نے کہا کہ آپ تو کیس آرگو کر رہے ہیں ،آپ کا مینڈیٹ کیا ہے؟ چیف الیکشن کمشنر نے مکالمہ کرتے ہوئے کہا کہ آپ صرف اکاونٹس پر بات کریں،

فنانشل ایکسپرٹ کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی نے الیکشن کمیشن میں اسٹینڈرڈ آڈٹ رپورٹ پیش کی ،اسکروٹنی کمیٹی نے پی ٹی آئی کی پوری رپورٹ کو قطع نظر کیا، اسکروٹنی کمیٹی کو رپورٹ کی خامیاں بتانی چاہیے تھیں،بینک اکاؤنٹس کھولنا بینکس کی ضرورت تھی ،الیکشن کمیشن میں پی ٹی آئی ممنوعہ فندنگ کیس کی سماعت کل 12بجے تک ملتوی کر دی گئی

الیکشن کمیشن میں پیشی کے بعد اکبر ایس بابر کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی فنانشل ماہرین نے رپورٹ پیش کی ،آج فارن فنڈنگ کیس میں کوئی پیش رفت نہیں ہوئی،آج پی ٹی آئی اکاؤنٹس کے نمائندے کی بریفنگ تھی ہمیں بتایا گیا تھا فنانشل ایکسپرٹ منی ٹریل دینگے ،فنانشل ایکسپرٹ تفصیلات نہ دے سکے ایکسپرٹ نے فنانسنگ کے بین الاقوامی اصولوں پر بات کی الیکشن کمیشن نے ان کو کہا کہ آپ اکاؤنٹس کی تفصیلات دیں جب ان کی تفصیلات ختم ہونگی تو ہم جواب دینگے،فنڈز کہاں سے آئے الیکشن کمیشن کو کل بتائیں گے، امید ہے اس کیس کا فیصلہ جلد محفوظ ہو جائے گا پاکستان کی موجودہ معاشی حالت پر توجہ کی ضرورت ہے، پاکستان انتشار کی سیاست کا متحمل نہیں ہو سکتا،سری لنکا کی امداد کو کوئی نہیں آیا،یہ ایک قومی سلامتی کا معاملہ ہے،

فارن فنڈنگ کیس، تحریک انصاف کو دیا الیکشن کمیشن نے بڑا جھٹکا

آپ اتنا مت گھبرائیں،فارن فنڈنگ کیس میں عدالت کا پی ٹی آئی وکیل سے مکالمہ

فارن فنڈنگ کیس،باہر سے پیسہ آیا ہے لیکن وہ ممنوعہ ذرائع سے نہیں آیا،پی ٹی آئی وکیل

فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ 30 روزمیں کرنے کا حکم اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج

فارن فنڈنگ کیس، فیصلہ 30 روز میں کرنے کے فیصلے کیخلاف اپیل سماعت کیلئے مقرر

فارن فنڈنگ کیس میں بھی عمران خان کو اب سازش نظر آ گئی، اکبر ایس بابر

ہم نے الیکشن کمیشن کو کاروائی سے نہیں روکا،قانون پر عملدرآمد نہیں ہو رہا،عدالت

فارن فنڈنگ کیس،اسکروٹنی کمیٹی رپورٹ میں معلومات قابل تصدیق نہیں ،وکیل

ممنوعہ فارن فنڈنگ کیس نومبر 2014 سے الیکشن کمیشن میں زیر سماعت ہے، اسلام آباد ہائیکورٹ نے فیصلہ دیا تھا کہ ایک ماہ میں فارن فنڈنگ کیس کا فیصلہ سنایا جائے تا ہم پی ٹی آئی دوبارہ عدالت پہنچی گئی اور اس فیصلے کو چیلنج کر دیا جس پر عدالت نے اسلام آباد ہائیکورٹ کے فیصلے کو معطل کر دیا، اور پی ٹی آئی کو اسلام آباد ہائیکورٹ سے ریلیف ملا

Leave a reply