پی کے 63 کے 6 ہزار ووٹ غائب، تحریک انصاف نے بھی دھاندلی کا "واویلا” شروع کر دیا

0
49

پی کے 63 کے 6 ہزار ووٹ غائب، تحریک انصاف نے بھی دھاندلی کا "واویلا” شروع کر دیا

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق پی ٹی آئی امیدوار عمر کاکا خیل نے دعویٰ کیا کہ پی کے 63 کے 6 ہزار ووٹ غائب ہیں، تصدیق شدہ فارم 46 میں واضح فرق ہے، 6 ہزار ووٹوں کا کوئی ریکارڈ نہیں۔

تحریک انصاف کے امیدوار عمر کاکا خیل نے الیکشن کمیشن سے رجوع کر لیا ہے اور دھاندلی کے حوالہ سے درخواست دے دی ہے،عمر کا کا خیل کا کہنا تھا کہ پی کے 63 نوشہرہ میں آر او اورعملےنے منظم دھاندلی کی ،پورے حلقے میں منظم انداز سے دھاندلی کی گئی،

وکیل عمر کاکا خیل کا کہنا تھا کہ 6 ہزار بیلٹ پیپرز چھپائے گئے ہیں،غیرجاری شدہ بیلٹ پیپرز کہاں گئے؟ جو بیلٹ پیپرزجاری نہیں کیے گئے ان پرمہرلگا کرانہیں بیلٹ بکس میں ڈال دیا گیا، پریذائیڈنگ افسر نے کم بیلٹ پیپرز جاری کیے اور بکسے سے زیادہ ووٹ نکلے، پولنگ ایجنٹس بتاتے ہیں کہ جمعہ کی نماز کے وقت دھاندلی کی گئی، ہم نے الیکشن کمیشن میں درخواست دائر کی ہے،ہم نے شواہد الیکشن کمیشن کو فراہم کردیے ہیں،

گزشتہ روز وزیر دفاع پرویز خٹک کا کہنا تھا کہ نوشہرہ الیکشن میں جو ہوا، اس کا نتیجہ جلد سامنے آ جائے گا، الیکشن کمیشن جائیں گے، ثابت کریں گے کہ بہت بڑا گھپلا ہوا ہے۔ خیبر پختونخوا کے حلقہ نوشہرہ پی کے 63 میں دھاندلی سے الیکشن جیتا گیا، ہمیں دھاندلی کے ثبوت مل گئے ہیں۔

پرویز خٹک نے دعویٰ کیا تھا کہ مسلم لیگ (ن) نے 6 ہزار جعلی ووٹ ڈالے، ان ووٹوں کا کوئی ریکارڈ نہیں ہے، تمام لسٹیں چیک کیں، ووٹوں کی چوری کی گئی، 2 روز میں لسٹیں چیک کیں تو ان کی چوری پکڑی گئی، تمام ثبوتوں کو عوام کے سامنے رکھا جائے گا، مجھ سے کوئی نہیں جیت سکتا۔

حکمران جماعت سوچ بھی نہیں سکتی تھی کہ وہ نوشہرہ سے ہارجائیں گے،مریم نواز

Leave a reply