پی ٹی ایم کے اراکین کے پروڈکشن آرڈر کے لئے شاہد خاقان عباسی بھی بول پڑے

سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ حکومت نے نااہلی کی وجہ سے دفاع بجٹ میں کمی کر کے ملک کے دفاع کو داو پر لگایا ، چار اراکین اسمبلی گرفتار ہیں جن میں سے دو کے پروڈکشن‌ آرڈ ر جاری نہیں کئے گئے،

وزیراعظم سے این آر او دن کو یا رات کو اور کس نے مانگا، بتایا جائے، شہباز شریف

سپیکر قومی اسمبلی نے شہباز شریف کی ایسی بات مان لی جو حکومت رد کر چکی

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے قومی اسمبلی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بات نہیں کرنے دیں گےتومسائل پیدا ہوتے رہیں گے چارارکان اس ہاؤس کے گرفتارہیں ،دوکےپروڈکشن آرڈرجاری کئےگئےدوکےنہیں ،انہوں نے مزید کہا کہ حکومت کہہ رہی ہےکہ افراط زر13فیصدپرآجائےگا ،آپ کیسے5550کےٹیکس اکٹھے کریں گے؟آمدن اوراخراجات کا فرق50فیصد سےبڑھ گیا ہے،

سرمنڈاتے ہی اولے پڑ گئے، شہباز شریف کا قومی اسمبلی میں خطاب

اسمبلی میں اٹھک بیٹھک کرا کر میری کمر در د کا علاج کرارہےہیں ؟شہبازشریف

قومی اسمبلی کا اجلاس،شہباز شریف کے خطاب پر حکومت کا احتجاج

شاہد خاقان عباسی نے مزید کہا کہ 1500 ارب اکٹھا کرنے کے لئے ہر چیز مہنگی کرنی پڑے گی،اس سال سود کے لئے 2900 ارب رکھے گئے اس سال سود کی قرم دفاعی اخراجات سے زیادہ ہے. حکومت نے نااہلی کی وجہ سے دفاع بجٹ میں کمی کر کے ملک کے دفاع کو داو پر لگایا ،شاہد خاقان عباسی نے مزید کہ اکہ حکومت مجموعہ طور پر 400 ارب روہے پر چلتی ہے سودکی رقم میں اضافہ نہ کرتےتوٹیکس بڑھانانہ پڑتے،بجٹ کی حقیقت نمبروں میں چھپی ہوئی ہے،

زرداری کے بعد فریال تالپور گرفتار،بزدلوں کی حکومت ہے، بلاول کا رد عمل

زرداری کے پروڈکشن آرڈرکے مطالبہ پر فواد چودھری خاموش نہ رہ سکے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.