fbpx

پرتعیش اشیا کی درآمدات پر پابندی سے سماجی عدم توازن کا بھی خاتمہ ہو گا،وزیراعظم

اسلام آباد: وزیر اعظم شہباز شریف نے کہا ہے کہ پرتعیش اشیا کی درآمدات پر پابندی سے سماجی عدم توازن کا بھی خاتمہ ہو گا۔

وزیر اعظم شہباز شریف نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ بات کرنے کی دعوت پر کراچی کی کاروباری برادری کا شکر گزار ہوں۔ پرتعیش اشیا پر پابندی کے حوالے سے کاروباری طبقے کو وضاحت دی۔

پانچ سال میں 36 ارب 87 کروڑ روپے بجلی صارفین سے پی ٹی وی فیس کی مد میں وصول

انہوں نے کہا کہ اشیائے پرتعیش پر درآمدی پابندی کا مقصد زرمبادلہ کی بچت، مستحکم کرنسی اور مقامی صنعت کا تحفظ ہے پرتعیش اشیا کی درآمدات پر پابندی سے سماجی عدم توازن کا بھی خاتمہ ہو گا۔

ملاقات میں وزیر مملکت برائے خارجہ امورحنا ربانی کھر بھی موجود تھیں-

واضح رہے کہ قبل ازیں بھی ملک میں زرمبادلہ کے ذخائر کے بحران سے نمٹنے کیلئےغیر ضروری اور پرتعیش اشیاء کی درآمد پر مکمل پابندی عائدکرنے کا فیصلہ کیا گیاتھا بدھ کو وزیراعظم شہباز شریف کی زیرِ صدارت اعلیٰ سطح کا اجلاس ہوا تھا جس میں ملک کی معاشی تشویشناک صورتحال کا جائزہ لیا گیا تھا شرکا نے معاشی مشکلات سے نمٹنے کیلئے سخت فیصلے کرنے پر اتفاق کیا تھا

شہباز شریف نے ملک میں زرمبادلہ کے ذخائر کے بحران سے نمٹنے کیلئے غیر ضروری اور لگژری اشیاء کی درآمد پر مکمل پابندی عائد کرتے ہوئے کہا تھا کہ اس فیصلے کا فوری طور پر اطلاق ہوگاغیر ضروری اورلگژری اشیاء کی درآمد پر قیمتی زرمبادلہ خرچ نہیں ہونے دیں گے وزیراعظم نے امپورٹ ایکسپورٹ بل میں فرق کی وجہ سے پابندی عائد کی –

اگلے مالی سال کا بجٹ 10جون کو قومی اسمبلی میں پیش کیا جائے گا

وزیراعظم نے درآمدی بل میں ماہانہ ایک ارب ڈالر کمی کیلئے وفاقی ریونیو بورڈ (ایف بی آر) کی تجاویز منظور کرتے ہوئے 1000CC سے بڑی گاڑیوں پر ریگولیٹری ڈیوٹی دگنی کاسمیٹکس، موبائل فون، سمیت 80 سے زائد مصنوعات کی درآمدات پر پابندی لگانے، بجلی سے چلنے والے گھریلو آلات پر 50فیصد، ٹائلز کی درآمد پر ریگولیٹری ڈیوٹی میں 40 فیصد اضافے کا فیصلہ کیا تھا تاہم کہا گیا تھا کہ ان تمام اقدامات کی حتمی منظوری اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) اور وفاقی کابینہ سے لی جائیگی.

بجلی بنانے کے کارخانوں کے لیے درآمدی مشینری پر ڈیوٹی 30 فیصد بڑھانے اور درآمدی اسٹیل اور اسٹیل مصنوعات پر ڈیوٹی کی شرح میں 10 فیصد اضافے کی تجویز حکومت کو دی گئی تھی نئی تجاویز میں سرامکس پر ریگولیٹری ڈیوٹی کی شرح میں 40 فیصد اضافے کی تجویز بھی دی گئی تھی-

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ فیصلے سے ایک ارب ڈالر زرمبادلہ کی بچت اور روپے بے قدری میں کمی ہوگی۔

پشاورفوڈ سیفٹی اتھارٹی کا چکن شاپ پر چھاپہ،3 ہزار سے زائد مردہ مرغیاں برآمد

وزیراعظم آفس کے میڈیا ونگ کی طرف سے جاری کی گئی فہرست کے مطابق جن اشیا کی درآمد پر پابندی عائد کی گئی ان میں موبائل فونز، ہوم اپلائنسز، فروٹس اور ڈرائی فروٹس (ماسوائے افغانستان)، کراکری، نجی اسلحہ و ایمونیشن، جوتے، فانوس اور لائٹنگ (ماسوائے انرجی سیورز)، ہیڈ فونز اور لائوڈ اسپیکرز، ساسز اور کیچپ وغیرہ، دروازوں اور کھڑکیوں کے فریم، سفری بیگز اور سوٹ کیسز، سینٹری ویئر، مچھلی اور فروزن فش، کارپٹس(ماسوائے افغانستان)، پریزروڈ فروٹس، ٹشو پیپر، فرنیچر، شیمپو، آٹو موبائلز، کنفیکشنری، پرتعیش میٹرس اور سلیپنگ بیگز، جام اور جیلی، کارن فلیکس، باتھ روم ویئرز/ٹوائلٹریز، ہیٹرز/بلورز، سن گلاسز، کچن ویئر، ایریٹڈ واٹر، فروزن گوشت، جوسز، پاستہ وغیرہ، آئسکریم، سگریٹس، شیونگ کا سامان، چمڑے کے پرتعیش ملبوسات، میوزیکل آلات، سیلون آئٹمز جیسے ہیئر ڈرائرز وغیرہ اور چاکلیٹس شامل ہیں۔

عمران خان کی گندی ذہنیت کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے، وزیراعظم شہباز شریف