اسرائیلی فوج کا لبنان کی سرحد پر قرون وسطیٰ دورکے ہتھیاروں کا استعمال کرنے کا انکشاف

یقین ہوگیا کہ اسرائیلی فورسز شکست سے دوچار ہوچکی ہیں
0
92
hizbullah

بیروت: اسرائیلی فوج کی جانب لبنان کی سرحد پر قرون وسطیٰ دورکے ہتھیاروں کا استعمال کرنے کا انکشاف ہو ا ہے جس کے بعد ر اسرائیلی عوام میں شدید غصے کی لہردوڑ گئی-

باغی ٹی وی : عرب میڈیا کے مطابق حزب اللہ جنگجو جنوبی لبنان میں جھاڑیوں میں چھپ کر اسرائیلی علاقوں پر راکٹ فائرکرتےہیں جس کے باعث اسرائیلی فوج نے جنوبی لبنان میں جھاڑیوں کو آگ لگانے کے لیے منجنیق سے آگ کےگولے پھینکے،منجنیق کی ویڈیو وائرل ہونے پر اسرائیلی عوام میں شدید غصے کی لہردوڑ گئی، کئی اسرائیلی شہریوں نے ویڈیو شئیر کرکے اپنی ہی فوج کو تنقید کا نشانہ بنایا۔

ایک اسرائیلی شہری نے طنز کرتے ہوئے کہا کہ منجنیق سے اسرائیلی فوج جلد حزب اللہ کو تباہ وبرباد کردے گی، یہ دیکھ کریقین ہوگیا کہ اسرائیلی فورسز شکست سے دوچار ہوچکی ہیں،جبکہ اسرائیلی فوج کے ترجمان کا کہنا ہے کہ یہ منجنیق سرحد پر تعینات ریزرو فوجیوں نے تیار کی تھی، ویڈیو ایک ماہ یا اس سے زائد عرصے پہلےکی ہے۔

جنوبی وزیرستان میں جے یو آئی کے سابق ضلعی امیر پر فائرنگ

دوسری جانب لبنان کی تنظیم حزب اللہ نے دعوی‌کیا ہے کہ اس نے منظم حملے میں راکٹوں اور اسلحے سے لیس ڈرونز کے ذریعے اسرائیل کی 9 فوجی تنصیبات کو نشانہ بنایا ہے،حزب اللہ نے بیان میں کہا کہ اسرائیل کی 6 فوجی تنصیبات پر کیتیوشا اور فلک راکٹس داغے ہیں جمعرات کو کیے گئے حملے ان کے کمانڈر کو نشانہ بنانے کا جواب تھا اور بدھ کو بھی 8 جوابی حملے کیے گئے تھے،المنار ٹیلی ویژن نے رپورٹ میں بتایا کہ حزب اللہ کی جانب سے ایک ساتھ 100 سے زائد راکٹ فائر کیے گئےراکٹوں کے ساتھ ساتھ ڈرون حملے بھی کیے گئے جس سے اسرائیل کی شمالی کمانڈ کا ہیڈکوارٹرز، خفیہ اطلاعات کا ہیڈکوارٹرز اور فوجی بیرکس نشانہ بنائی گئیں۔

حزب اللہ کا راکٹوں اور ڈرونز سے اسرائیل کی 9 فوجی تنصیبات کو نشانہ بنانے …

Leave a reply