قرضوں کی بہتر مینجمنٹ کیلیے فوری طور پر ڈیبٹ مینجمنٹ آفس قائم

0
56

وفاقی حکومت نے بڑھتے ہوئے قرضوں کی بہتر مینجمنٹ کیلیے فوری طور پر ڈیبٹ مینجمنٹ آفس قائم کر دیاہے.

وفاقی حکومت نے بڑھتے ہوئے قرضوں کی بہتر مینجمنٹ کیلیے فوری طور پر ڈیبٹ مینجمنٹ آفس قائم کر دیا۔وفاقی حکومت نے ملک پر قرضوں کے بڑھتے ہوئے بوجھ کو کم کرنے کی حکمت عملی وضع کرنے اور قرضوں کی بہتر مینجمنٹ کیلیے فوری طور پر ڈیبٹ مینجمنٹ آفس قائم کر دیاہے. یہ ڈیبٹ مینجمنٹ آفس ڈیبٹ لمیٹیشن (ترمیمی) ایکٹ 2022 کی سیکشن 6 کے تحت وفاقی حکومت کی منظوری سے قائم کیا گیاہے.

وزارت خزانہ کے ہیومن ریسورس مینجمنٹ ونگ نے نوٹیفکیشن بھی جاری کر دیاہے.جس کے ذریعے خزانہ ڈویژن کی جانب سے 13 اپریل 2006 کو جاری کردہ نوٹیفکیشن میں ترامیم کر دی گئی ہیں۔ اس بارے میں وزارت خزانہ کے حکام کا کہنا ہے کہ مذکورہ ڈیبٹ مینجمنٹ آفس ملک پر قرضوں کے بڑھتے ہوئے بوجھ میں کمی کیلئے قرضوں کی بہتر مینجمنٹ کی پالیسی اور حکمت عملی وضع کرے گا۔
مزید یہ بھی پڑھیں.
وزیر خارجہ کی پاکستانی نژاد امریکی کمیونٹی کے رہنماؤں سے ملاقات
پاکستان کو سیلاب کی تباہ کاریوں سے نمٹنے کے لئے عالمی برادری کے ٹھوس تعاون کی ضرورت ہے.اقوام متحدہ
اسلام آباد سے کراچی سفر کرنیوالی پرواز کا مسافردوران سفر انتقال کر گیا
بجلی 31.60 روپے فی یونٹ، گیس 100فیصد مہنگی کرنیکی تجویز
ذرائع کا کہنا ہے کہ ملک میں قرضوں میں کمی کیلیے ڈیبٹ آفس 2006 سے قائم ہے مگر قرضوں میں کمی کی بجائے مسلسل اضافہ ہورہا ہے،اس لئے اب جو ڈیبٹ مینجمنٹ آفس قائم کیا گیا ہے اس کیلیے بھی یہ بڑا چیلنج ہوگا کہ وہ قرضوں کی کمی کیلیے کیا مینجمنٹ پالیسی متعارف کرائے گا۔

Leave a reply