fbpx

قیمتوں میں اضافے کے باعث لاکھوں کی دیہاڑیاں

قصور
کل صبح سے ہی پیٹرول پمپوں پر پیٹرول کی فروخت بند رہی، رات پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کے باعث پیٹرول پمپ مالکان نے لاکھوں روپیہ کی دیہاڑیاں لگائیں

تفصیلات کے مطابق گورنمنٹ آف پاکستان نے ایک بار پھر عوام پر پیٹرولیم بمب کا وار کیا ہے
15 جون کو پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں متوقع اضافہ کے پیش نظر کل سارا دن پیٹرول پمپوں پر پیٹرولیم مصنوعات کی فروخت بند رکھی گئی اور رات باراں بجے کے بعد نئی قیمتوں کے اطلاق کیساتھ ہی پیٹرولیم مصنوعات کی سیل نئی قیمتوں پر کی گئی جس کے باعث پیٹرول پمپ مالکان نے لاکھوں روپیہ کی دیہاڑیاں لگائیں
نئی گورنمنٹ کے آتے ہیں تیسری مرتبہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ ہوا ہے جس کے باعث مہنگائی کا نیا طوفان آیا ہے
لوگوں نے نئی گورنمنٹ کی طرف سے بار بار پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں پر اضافہ پر تشویش کا اظہار کیا اور کہا کہ آئی ایم ایف کے ایجنڈے پر چلتے ہوئے ملک کو شام و لیبیا کی طرح خانہ جنگی کی طرف دھکیلا جا رہا ہے
لوگوں کا کہنا ہے کہ حکمران مت بولیں کہ جب عوام کے ضبط کا بندھن ٹوٹا تو پھر حکمران بھی اس خانہ جنگی سے بچ نا پائینگے بلکہ عوام سے پہلے حکمران رگڑے جائینگے لہذہ حکومت نظر ثانی کرے ورنہ عوام تو بھوکی مر ہی رہی ہے زندگیاں ان حکمرانوں کی بھی تنگ ہو جائیں گیں