کوئٹہ، اہم حکومتی شخصیت میں بھی کرونا وائرس کی تشخیص

کوئٹہ، اہم حکومتی شخصیت میں بھی کرونا وائرس کی تشخیص ہو گئی
باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر کوئٹہ ثاقب کاکڑ میں بھی کرونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے

بلوچستان میں کرونا سے متاثرہ افراد کی تعداد 241 ہو گئی ہے، آٹھ مزید کیسز سامنے آئے ہیں جو مقامی ہیں.بلوچستان میں اب تک کرونا کے 124 مریض صحتیاب ہو چکے ہیں.

ثاقب کاکڑ نے کرونا وائرس کا ٹیسٹ مثبت آںے کے بعد انہوں نے خود کو قرنطینہ کر لیا ہے، ثاقب کاکڑ بلوچستان میں کرونا وائرس کے حوالہ سے حکومتی کاموں کے حوالہ سے متحرک تھے.

قبل ازیں بلوچستان کے وزیراعلیٰ جام کمال خان کی زیر صدارت کوئٹہ میں ایک اعلیٰ سطح کا اجلاس ہوا جس میں صوبے میں کورونا وائرس سے پیدا ہونے والی صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس کے دوران کوروناوائرس کی وبا سے پیدا ہونےوالی صورتحال کے تناظر میں گندم کی خریداری کی منظوری دی گئی۔ سرکاری شعبوں میں تعمیراتی سرگرمیاں شروع کرنے کے حوالے سے بھی فیصلے کئے گئے۔

بلوچستان میں کرونا وائرس سے 2 اموات ہو چکی ہیں، بلوچستان حکومت نے کرونا سے بچاؤ کے لئے 21 اپریل تک لاک ڈاؤن کا اعلان کر رکھا ہے.

دوسری جانب کوئٹہ شہر میں تاجروں نے ازد خود لاک ڈائون ختم کرنا شروع کردیا ہے،کوئٹہ شہر کے مین کاروباری مراکز مسجد روڈ , فاطمہ جنا ح روڈ , لیاقت بازار کٹ پیس گلی میں دوکانداروں نے مارکیٹوں کے اندر کی دوکانیں کھولنا شروع کردی ہیں.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.