fbpx

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی ایران اور افغان ہم منصب سے ملاقات

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی ایران اور افغان ہم منصب سے ملاقات

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق تاجکستان کے دارالحکومت دشنبے میں منعقدہ نویں ہارٹ آف ایشیا – استنبول پراسس "کانفرنس کے موقع پر وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی کی ایرانی ہم منصب جواد ظریف سے ملاقات ہوئی ہے

دوران ملاقات دو طرفہ تعلقات ، مختلف شعبہ جات میں دو طرفہ تعاون کے فروغ اور خطے میں امن و امان کی مجموعی صورتحال سمیت باہمی دلچسپی کے مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا گیا،مخدوم شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ پاکستان, ایران کے ساتھ دو طرفہ برادرانہ تعلقات کو خصوصی اہمیت دیتا ہے ان دو طرفہ تعلقات کی بنیاد یکساں تاریخ، جغرافیائی قربت اور مشترکہ مفادات پر قائم ہے پاکستان اور ایران کے درمیان ادارہ جاتی میکنزم سے مختلف شعبہ جات میں دو طرفہ تعاون میں اضافہ ہوا ہے پاکستان اور ایران کے مابین تجارتی و اقتصادی تعاون کے فروغ کے کثیر مواقع موجود ہیں جن سے استفادہ کرنے کی ضرورت ہے وزیر خارجہ نے توقع ظاہر کی کہ پاک ایران باڈر مارکیٹ کے جلد قیام سے دونوں ممالک یکساں مستفید ہوں گے وزیرخارجہ نے بین الاقوامی فورمز پر مسئلہ کشمیر کے حوالے سے پاکستانی موقف کی مسلسل حمایت پر، ایرانی وزیر خارجہ کا شکریہ ادا کیا دونوں وزرائے خارجہ کے مابین خطے کی صورتحال بالخصوص افغان امن عمل پر خصوصی تبادلہ ء خیال ہوا مخدوم شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ بین الافغان مذاکرات میں اب تک سامنے آنے والی پیش رفت حوصلہ افزا ہےبین الافغان مذاکرات کا نتیجہ خیز ہونا، افغانستان میں دیرپا امن کیلئے ناگزیر ہے پر امن افغانستان ، خطے کی ترقی، استحکام اور روابط کے فروغ کیلئے بہت اہم ہے وزیر خارجہ نے دورہ ایران کی دعوت پر ایرانی ہم منصب کا شکریہ ادا کیا دونوں وزرائے خارجہ نے دو-طرفہ تعاون کے فروغ اور خطے میں قیام امن کیلئے مشترکہ کاوشیں بروئے کار لانے پر اتفاق کیا

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کی, دشنبے میں منعقدہ نویں ہارٹ آف ایشیا استنبول پراسس اجلاس کے موقع پر افغان ہم منصب محمد حنیف آتمر سے بھی ملاقات ہوئی ہے، ملاقات میں دو طرفہ تعلقات اور افغان امن عمل سمیت باہمی دلچسپی کے امور پر گفتگو ہوئی۔ مخدوم شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ پاکستان، افغانستان کے ساتھ تاریخی اور دیرینہ برادرانہ تعلقات کو خصوصی اہمیت دیتا ہے،دونوں وزرائے خارجہ نے ہارٹ آف ایشیا استنبول پراسس اجلاس کے انعقاد کو سراہتے ہوئے اسے مثبت سمت میں اہم قدم قرار دیا

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.