رمضان شوگر ملز کا چیف ایگزیکٹو کون؟ حمزہ شہباز ضمانت کیس میں عدالت کا استفسار

پبنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز کی درخواست ضمانت پرہائی کورٹ میں سماعت ہوئی

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق حمزہ شہباز کے وکیل نے عدالت میں کہا کہ ریفرنس دائر اور فرد جرم عائد ہو چکی ہے،احتساب عدالت نےرمضان شوگر ملزکیس میں 2 گواہوں کے بیانات رکارڈ کر رکھے ہیں، جسٹس علی باقر نجفی نے استفسار کیا کہ رمضان شوگر ملزکے قریب سیوریج نالا کب بنا؟یہ فیکٹری کہاں واقع ہے؟ جس پر حمزہ شہباز کے وکیل نے کہا کہ رمضان شوگرملزموضع دورٹہ تحصیل بھوانہ میں واقع ہے،اسی کیس میں شہباز شریف کی ضمانت منظور ہو چکی ہے،یہ تمام حقائق شہبازشریف کی ضمانت کی درخواست میں بتائے جا چکے ہیں، جسٹس علی باقر نجفی نے پھر پوچھا کہ رمضان شوگر ملز کا چیف ایگزیکٹو کون ہے؟ جس پر حمزہ شہباز کے وکیل نے بتایا کہ 2014سے 2016تک حمزہ شہباز رمضان شوگرملز کےچیف ایگزیکٹو رہے، جسٹس علی باقر نجفی نے نیب سے پوچھا کہ کیا نیب نے شہباز شریف کی ضمانت منظوری کیخلاف سپریم کورٹ سے رجوع کیا؟ جس پر نیب کے وکیل نے کہا کہ جی، شہبازشریف کی سپریم کورٹ میں ضمانت منسوخی کی درخواست دائرکی ہےمگرابھی زیر التواہے.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.