fbpx

قیامت سے پہلے قیامت:قصورایک بارپھرقصوروار:سگے باپ نے اپنی تین بیٹیوں کونہرمیں ڈبوکرقتل کردیا

الٰہ آباد :قیامت سے پہلے قیامت:قصورایک بارپھرقصوروار:سگے باپ نے اپنی تین بیٹیوں کونہرمیں ڈبوکرقتل کردیا،اطلاعات کے مطابق قصور شہر کی تحصیل چونیاں کے بڑے قصبے الٰہ آباد میں ایسا واقعہ رونما ہوا ہے کہ جس کو دیکھ کرلوگ یہ یقین کربیٹھے ہیں کہ واقعی قیامت سے پہلے قیامت برپا ہوگئی ہے،

قصور جہاں بچوں اور بچیوں کے ساتھ ظلم وزیادتی کے ایسے واقعات ہوچکے ہیں کہ دنیا بھی اہل قصور کوقصوروار قرار دے کرایسے واقعات کی روک تھام کے لیے موبلائز کرتے آرہے ہیں ،

 

 

الہ آباد کے نواحی قصبہ بگھیانہ سے 2 دن قبل قتل اورفائرنگ کے جنونی گرفتار ملزم اسلم فائرنگ وقوعہ سے قبل اپنی 3 بیٹیوں ملائکہ عمر 8 سال، فاطمہ بتول عمر 7سال اورنمرہ عمر 6 سال کو مبینہ طور پر راجووال نہر میں پھینک کر ہلاک کرنے کے بعد فائرنگ کی

وثوق ذرائع کے مطابق ملزم اسلم نے اپنی بیوی سے کہا کہ تم بیٹے کو لیکر لاھور پہنچوں میں نے بچیوں کو اسکول سے لے لیا ہے ان لیکر لاھور پہنچتا ہوں ملزم اسلم کی بیوی بیٹے کو لیکر لاھور پہنچ گئی تو فائرنگ کے وقوعہ کی اطلاع مل گئی ملزم کی بیوی رشتہ داروں کو فون کر کے بچیوں بارے پوچھ کرتی رہی نہ پاکر آج صبح تھانہ الہ آباد پہنچی

یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ اس کے بعد اس خاتون نے ساری کہانی ایس ایچ او حافظ یاسر کو بیان کی فائرنگ وقوعہ کی روشنی میں سوچ بچار کے بعد کہ کہیں غلط رنگ دینے کی کوشش تو نہیں ملزم سے دریافت کیا تو ملزم معقول جواب نہ دیا تو حوالات بند کر دیا تھوڑی دیر بعد دھاڑیں مار کر رونے لگا اور اقبال جرم کیا کہ میں نے راجوال نہر میں تینوں بچیوں کو پھنک کر ہلاک کر دیا ہے

ملزم کی نشاندھی کے مطابق جہاں بچیوں کو پھینکا تھا چند فرلانگ کے فاصلے پر بچیوں کی جوتیاں دوپٹہ اسکارف وغیرہ ملے ہیں ملزم کی بیوی نے پہنچان لیا کہ یہ میری بچیوں کی نشانیاں ہیں ماں پر غشی کے دورے ،

بچیوں کی نعشوں کو تلاش کرنے کیلئے راجووال نہر سے آپریشن کرکے ریسکیو ٹیموں کی جانب سے ایک بچی کی نعش کو تلاش کر لیا گیا ہے۔ ملنے والی نعش کی شناخت ملائکہ بتول کے نام سے ہوئی ہے۔ دوسری بچیوں کی نعشوں کی تلاش کےلیے سرچ آپریشن جاری۔

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!