رحیم یارخان( )ایک روزہ فائر سیفٹی ورکشاپ کاانعقاد

رحیم یارخان( )چیف ایگزیکٹیو آفیسر (صحت)ڈاکٹر سخاوت رندھاوا اور ڈسٹرکٹ ہیلٹھ آفیسرڈاکٹرغضنفرشفیق کی استدعا پرریسکیو1122نے ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی کے آفس میں ایک روزہ فائر سیفٹی ورکشاپ کاانعقاد کیا۔جس میں سی ای او ہیلتھ،ڈی ایچ او،ڈپٹی ڈی ایچ او،ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی کے تمام افسران،دیگراہلکاروں اوردرجہ چہارم کے ملازمین نے شرکت کی۔ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسرڈاکٹرعبدالستاربابر نے افتتاحی کلمات میں فائر سیفٹی کی افادیت پر ایک مفصل لیکچر دیا۔انہوں نے بتایا کہ ریسکیو1122نے 3ہزار سے زائد فائر حادثات کو ہیندل کیا۔ان حادثات میں بڑے پیمانے پر مالی نقصان ہوا ، اسی طرح کروڑوں روپوں کے مالی نقصان سے بچایاگیااور سینکڑوں لوگ جلنے کی وجہ سے متاثر ہوئے۔ان کے مطابق بڑی تعدادمیں حادثات گھروں اور کام کرنے کی جگہوں پر وقوع پذیر ہوئے،ان میں نقصان کی بڑی وجہ فائرسیفٹی آلات کی تنصیب کا نہ ہونااور فائر ایکسٹینگیشرکے استعمال سے لاعلمی تھی۔ریسکیو1122کامقصداورترجیح فائرحادثات کی روک تھام ہے۔سرکاری ہسپتالوں میں فائر سیفٹی کورسزپروگرام کے ساتھ ساتھ نجی ہسپتالوں میں آگ لگنے کے حادثات کو مدنظر رکھتے ہوئے اس پروگرام کا دائرہ تمام نجی ہسپتالوں تک بڑھایا جارہا ہے۔تمام شرکاءکو ریسکیوانسٹرکٹرز نے پریزینٹیشن کے ذریعے آگ کی اقسام،وجوہات اور تدارک،فائر ایکسٹینگئیشر کی اقسام،ان کے استعمال کا طریق کار اور تنصیب کرنے پر توجہ مرکوز کروائی گئی۔ لیکچر کے آخر میں ڈاکٹرعبدالستاربابر نے تمام شرکاءسے حلف لیا کہ وہ ایک آگ بجھانے والا آلہ اپنے اپنے گھر،کام کرنے والی جگہ اور گاڑی میں تنصیب کروائیں گے اور حاصل کی جانے والی فائر سیفٹی تربیت کو اپنے گھر والوں،دوستوں،رشتہ داروں اوردیگر احباب تک پہنچائیں گے۔تربیتی ورکشاپ کے آخر میں تمام شرکاءکو آگ بجھانے والے آلہ کے استعمال کی عملی مشقیں کرائی گئیں ،جس میں تمام افسران سمیت شرکاءنے فرداََ فرداََ آگ بجھانے کا عملی مظاہرہ کیا۔سی ای او (صحت) ڈاکٹر سخاوت رندھاوااور ڈی ایچ او ڈاکٹر غضنفر شفیق نے اختتامی الفاظ میں ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسرڈاکٹرعبدالستاربابراور ریسکیوٹیم کی طرف سے کامیاب فائرسیفٹی ورکشاپ پر شکریہ ادا کیا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.