ورلڈ ہیڈر ایڈ

ترکی:ایس۔400 کی پہلی کھیپ 10 دنوں کے اندر ترکی پہنچ جائیگی، طیب اردوان

استمبول:ترک صدر طیب رجب اردوان نے بالآخر روس سے ایس-400 دفاعی میزائل سسٹم کی خریداری سے متعلق امریکی دباو کو مسترد کرتے ہوئے یہ انکشاف کیا ہے کہ ترکی روس سے ایس -400 میزائل سسٹم لے گا نہیں بلکہ لے چکا ہے اور پہلی کھیپ اگلے دس دنوں تک ترکی پہنچ جائے گی.ایس ۔400 کے معاملے میں ٹرمپ کے ترکی کو حق بجانب ٹھرانے کی وضاحت کرنے والے ایردوان کا کہنا تھا کہ”جناب ٹرمپ نے یہ نہیں کہا کہ ترکی پر فلاں فلاں پابندیاں عائد کی جائینگی۔ ایس۔400 کے معاملے میں بھی انہوں نے کہا کہ”آپ کا مؤقف درست ہے، یہ چیز انتہائی اہم ہے۔ روسی صدر ولادیمر پوتن سے سہہ رکنی ملاقات میں ٹرمپ نے ایک بار پھر معقول باتیں کیں۔ میں سمجھتا ہوں کہ کسی قسم کی پریشانی کے بغیر ہم اس سلسلے کی تکمیل کریں گے۔ ایک ہفتہ۔ 10 دنوں میں ایس۔400 کی پہلی کھیپ ترکی پہنچ جائیگی۔”

طیب اردوا ن نے کہا ہے کہ”ٹیکنالوجی کے اعتبار سے ایس۔400، تین پیٹریاٹ کے مترداف ہے۔ اس کے باوجود ہمیں پیش کردہ شرائط کا جائزہ لینا ہو گا، اگر شرائط ایس۔400 کے مساوی ہوئیں تو ہم پیڑیاٹ خرید لیں گے۔ لیکن اگر ایسا نہ ہوا اور تم محض اپنے فائدے کا سوچو گے تو پھر ہم بھی منافع میں ہونے والے معاملے کو ترجیح دیں گے۔ ہم اس چیز کا واضح طور پر اظہار کر چکے ہیں۔”

مذاکرات میں ایف۔35 کی ترکی کو حوالگی کا معاملہ ایجنڈے میں آنے کا ذکر کرنے والے صدرِ ترکی نے بتایا کہ اس سلسلے کا تعاقب وزارت دفاع و خارجہ کریں گی۔ ترک ہوائی فرم امریکہ سے ایک سو بوئنگ طیارے خریدے گی اور ٹرمپ کے دورہ ترکی سے ان تعلقات کو مزید آگے لیجایا جائیگا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.