fbpx

کیپٹن (ر) صفدر کی گرفتاری اور آئی جی سندھ واقعے کی انکوائری رپورٹ مرتب

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق ن لیگی رہنما مریم نواز کے شوہر کیپٹن (ر) صفدر کی کراچی میں گرفتاری اور آئی جی سندھ واقعے کی انکوائری رپورٹ سندھ حکومت نے مرتب کر لی ہے

سندھ کے 5 وزرا پر مشتمل کمیٹی نے رپورٹ فائنل کی، اس حوالہ سے اہم اجلاس آج ہوگا، جس میں ارکان رپورٹ پر دستخط کریں گے۔ رپورٹ میں ہوٹل چھاپے اور کیپٹن (ر) صفدر کی گرفتاری کو قانون سے ماورا قرار دیا گیا۔

کمیٹی نے کیپٹن (ر) صفدر کیخلاف مقدمے کو اختیارات سے تجاوز قرار دیا۔ رپورٹ میں پس پردہ اسباب، معاملات اور اہم کرداروں کا بھی ذکر ہے۔ انکوائری کمیٹی نے پی ٹی آئی رہنماؤں کے کردار کا بھی ذکر کیا، رپورٹ میں دستاویزی اور تصویری شواہد کو بھی شامل کیا گیا ہے۔

رپورٹ کو پبلک کرنے یا نہ کرنے کا حتمی فیصلہ سندھ کابینہ کے فورم پر کیا جائے گا۔ انکوائری کمیٹی 22 اکتوبر کو قائم کی گئی، جسے ایک ماہ میں تحقیقات کا ٹاسک دیا تھا۔

کیپٹن ر صفدر کی گرفتاری، وفاقی وزراء نے بڑا مطالبہ کر دیا

کراچی جلسہ میں بلانے والی پیپلز پارٹی نے کیپٹن ر صفدر کی گرفتاری پر ہاتھ کھڑے کر دیئے

نواز شریف کا مریم نواز سے رابطہ، اہم ہدایات دے دیں،مریم سے ایک اور اہم شخصیت کا بھی رابطہ

مریم کو ذاتی حیثیت میں بلایا تھا،نیب نے ن لیگ کے خلاف بڑا فیصلہ کر لیا

مریم نواز کی گاڑی پر پتھراؤ، شہباز شریف، بلاول بھی میدان میں آ گئے

کیپٹن صفدر کا کورٹ مارشل کرو، اب سب اندرجائیں‌ گے،مبشر لقمان کا اہم انکشاف

کیپٹن ر صفدر کی گرفتاری کی ویڈیو سامنے آ گئی، پولیس کی جانب سے وی وی آئی پی پروٹوکول

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے جب انکوائری کمیٹی تشکیل دی تھی اسوقت کہا تھا کہ واقعے کی تحقیقات کیلئے تین سے پانچ رکنی کمیٹی بنانے کا پلان بنایا ہے۔ کیپٹں ریٹائرڈ صفدر کی ضمانت سے ثابت ہو گیا ہے کہ کیس جھوٹا بنایا گیا۔ پی ٹی آئی نے مقدمے کیلئے دباؤ ڈالا۔ انہوں نے سوال اٹھایا کہ کیس کا مدعی وقاص مزار قائد پر کیا کر رہا تھا، اس کے علاوہ اور بھی باتیں سامنے آئی ہیں، اس معاملے کی مکمل تحقیقات ہوں گی۔

کراچی جلسہ میں بلانے والی پیپلز پارٹی نے کیپٹن ر صفدر کی گرفتاری پر ہاتھ کھڑے کر دیئے

مریم کے شوہر کی گرفتاری پر ن لیگ کیا کرنیوالی ہے؟ مریم کے ترجمان نے بتا دیا

مریم نواز کے ترجمان کیپٹن ر صفدر کو تھانے ملنے گئے تو کیا ہوا؟

کیپٹن ر صفدر کی گرفتاری میں کس کا ہاتھ؟ کامران خان نے نام بھی بتا دیا

مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ مزار قائد کے تقدس کے قوانین موجود ہیں۔ پی ٹی آئی نے کئی بار مزارِ قائد کی بے حرمتی کی۔ ہم نے پولیس کو سب کی درخواست لینے کی ہدایت کی ہے۔ ہم پی ڈی ایم کے شکر گزار ہیں کہ وہ 18 اکتوبر کے جلسے میں آئے اور شہدا کو خراجِ تحسین پیش کیا۔ پاکستان کے عوام کا شکر گزار ہوں کہ قائدین کو سنا اور نااہل وفاقی حکومت کے سامنے احتجاج بھی کیا۔ تحریکِ انصاف کے گھبرائے اور بوکھلائے ہوئے لوگ پروپیگنڈے میں مصروف رہے۔

واضح رہے کہ کراچی میں مزار قائد پر کیپٹن ر صفدر نے ہلڑبازی کی تھی جس پر مقدمہ درج کیا گیا تھا اور پی ڈی ایم جلسے کے بعد پولیس نے رات کو ہوٹل سے کیپٹن ر صفدر کو گرفتار کیا گیا تھا، بعد ازاں عدالت نے انکی ضمانت کی تھی،

کیپٹن ر صفدر کی گرفتاری کی ویڈیو سامنے آ گئی، پولیس کی جانب سے وی وی آئی پی پروٹوکول