حکومت دہشت گردوں کے خلاف مصلحت کے بجائے کھل کر کاروائی کرے.

پاسبان ڈیموکریٹک پارٹی کے وائس چیئرمین عبدالحاکم قائد نے کہا ہے کہ پاسبان ہزارہ کمیونٹی کے افراد کے قتل کی شدید مذمت کرتی ہے۔

حکومت تمام شہریوں کی جان و مال کو حفاظت دینے کی اپنی ذمہ داری پوری کرے۔ پاکستانی عوام بھارتی و دشمن سازشوں کو پہچانیں اور ہر حال میں آپس میں اتفاق کو برقرار رکھیں۔

بلوچستان میں مسلسل رونما ہونے والے دہشت گردی کے واقعات بدترین ظلم اور لمحہ فکریہ ہیں۔ جو کان کن اپنے بچوں کا پیٹ بھرنے کے لئے کان کنی جیسا مشقت طلب اور جان لیوا کام کرتے ہیں پاسبان کی پوری ٹیم انہیں سلام پیش کرتی ہے۔

دہشت گردی اور قتل و غارتگری کرنے والے مسلمان نہیں ہو سکتے یہ کام را کے ایجنٹوں کا ہے۔ ملک دشمن قوتیں، پاکستان کا حال عراق اور شام جیسا کرنا چاہتی ہیں۔ پاکستانی عوام متحد ہیں اور مل کر سنی و شیعہ بھائیوں کے درمیان منافرت پھیلانے کی ہر سازش کو ناکام کر دیں گے۔

اگر پاکستان میں پراکسی وار لڑی جا رہی ہے تو حکومت پاکستان مصلحت اندیشی کے بجائے کھل کر کاروائی کرے۔ عمران خان جوتشیوں کی جانب سے غریب سگنل کا انتظار نہ کریں بلکہ مشکل کی اس گھڑی میں ہزارہ برادری کے ساتھ کھڑے ہوکر یکجہتی کا مظاہرہ کریں۔ جو بھی مزدور شہید ہوئے ہیں وہ محنت کش تھے اور ہمارے بھائی ہیں۔

دکھ کی اس گھڑی میں پوری قوم مظلوموں کے ساتھ ہے۔ بلوچستان کے مسئلے کا سیاسی حل نکالا جائے۔بلوچستان کے سانحہ مچھ میں مذہبی منافرت کو ہوا دینے کی کوشش کی گئی ہے۔ عوام اشتعال انگیزی کے بجائے بردباری سے کام لیں اور ایسی سازشوں کو کامیاب نہ ہونے دیں۔ بلوچستان کی صوبائی حکومت سانحہ مچھ کی شفاف تحقیقات کے لئے کمیٹی تشکیل دے اور ذمہ داروں کو جلد از جلد کیفر کردار تک پہہنچایا جائے۔

پاسبان پریس انفارمیشن سیل سے جاری کردہ بیان میں عبدالحاکم قائد نے مچھ میں گیارہ افراد کے بہیمانہ قتل پر اظہار افسوس کرتے ہوئے مزید کہا کہ ملک دشمن عناصر پاکستانی عوام کو عصبیت، قومیت اور لسانیت کے نام پر لڑوا کر اپنے مذموم مقاصد حاصل کرنے کی گھناؤنی سازشوں میں مصروف ہیں۔ کلبھوشن اور اس قبیل کے دہشت گردوں کو پھانسی نہ دی گئی تو ہزارہ جیسے سانحات کو نہیں روکا جا سکتا۔ مہنگائی بے روزگاری،پے در پے ناانصافیوں اور سانحات پر حکومت کے کمزور موقف نے تبدیلی کا جنازہ نکال دیا ہے۔ مصلحت پسند اور الیکٹ ایبلز وڈیرہ شاہی اور لٹیرا شاہی پر مبنی لیڈرشپ ملک کے حالات کبھی نہیں بدل سکتی۔

پاسبان ڈیموکریٹک پارٹی کے مشن و مقصد کے مطابق عام آدمی کو اسمبلیوں میں آنے کا موقع دیا جائے اور ملک میں ہر سطح پر میرٹ کے نفاذ کو یقینی بنایا جایا.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.