fbpx

سعودی عرب سے کتنے لاکھ ریال سالانہ آتے ہیں؟ اکبر ایس بابر کا فنڈنگ کیس بارے اہم انکشاف

سعودی عرب سے کتنے لاکھ ریال سالانہ آتے ہیں؟ اکبر ایس بابر کا فنڈنگ کیس بارے اہم انکشاف

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق الیکشن کمیشن میں پی ٹی آئی غیرملکی فنڈنگ کیس کی سماعت مکمل ہونے کے بعد فیصلہ محفوظ کر لیا گیا

اسکرونٹی کمیٹی کے ریکارڈ کی فراہمی سے متعلق اکبر ایس کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کیا گیا،فیصلہ محفوظ ہونے کے بعد اکبر ایس بابر نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اسکروٹنی کمیٹی حقیقت کو چھپا رہی ہے اسکروٹنی پروفیشنل آڈیٹر سے کرائی جائے پی ٹی آئی 2013 کا ریکارڈ دینے سے انکاری ہے ،اسکروٹنی کمیٹی کہتی ہے پی ٹی آئی ریکارڈ نہیں دے رہی ،سپریم کورٹ کے حکم کے مطابق 2013 کا ریکارڈ جمع کرانا ہوگا ،ہم نے امریکا سے تین ملین ڈالر کا ثبوت دیا ہے، سعودی عرب سے 7 لاکھ ریال سالانہ آتے ہیں، اس کا ثبوت دیاہے،ہمیں الیکشن کمیشن سے امید ہے، انہی اداروں سے انصاف لیں گے، غیر قانونی فنڈنگ میں ملوث لوگوں کے خلاف کارروائی ہونا چاہیے،

قبل ازیں الیکشن کمیشن میں پی ٹی آئی غیرملکی فنڈنگ کے ریکارڈ فراہمی سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی درخواستگزار اکبر ایس بابر اور پی ٹی آئی وکیل شاہ خاور الیکشن کمیشن میں پیش ہوئے،چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ کی سربراہی میں 4 رکنی کمیشن نے سماعت کی،وکیل نے کہا کہ پی ٹی آئی فارن فنڈنگ کیس کا ریکارڈ نہ فراہم کرنے پر الیکشن کمیشن کا فیصلہ حتمی ہے،چیف الیکشن کمشنر نے پی ٹی آئی وکیل سے سوال کیا کہ ریکارڈ فراہم نہ کرنے پر مسائل کیا ہیں؟ وکیل پی ٹی آئی نے کہا کہ اسکروٹنی کمیٹی ریکارڈ کا جائزہ لیکر رپورٹ کمیشن کو دے گی سپریم کورٹ نے حنیف عباسی کیس میں الیکشن کمیشن کو ریکارڈ کا جائزہ لینے کا کہا پبلک معلومات اور ریکارڈ کسی کو بھی دیا جاسکتا ہے،،الیکشن کمیشن ممبر پنجاب نے وکیل سے مکالمہ کرتے ہوئے کہا کہ سچائی تک پہنچنے میں ریکارڈ دینا چاہیے ،لفظوں کی لڑائی میں پہلے ہی بہت تاخیر ہوچکی ہے، وکیل نے کہا کہ پارٹی دستاویز پارٹی کی پراپرٹی ہوتے ہیں،صرف پبلک ڈاکومنٹس فراہم کیے جا سکتے ہیں، ممبر سندھ نے کہا کہ کمیٹی اسکروٹنی کرے گی اور الیکشن کمیشن کو رپورٹ کرے گی،اکبر ایس بابر نے کہا کہ پی ٹی آئی نے جو دستاویزات دیئے اس کی تصدیق کرنا ہمارا حق ہے،ممبر الیکشن کمیشن نے کہا کہ جب اسکروٹنی کمیٹی کی رپورٹ آئے گی تو سب اوپن ہو گا،

واضح رہے کہ وزیر اعظم عمران خان نے فارن فنڈنگ کیس کی کھلی سماعت کرنے کا چیلنج دیا تھا جسے مسلم لیگ ن نے وزیر اعظم کے اس چیلنج کو قبول کرلیا تھا وزیراعظم عمران خان نے کہا تھا کہ فارن فنڈنگ کیس کی کھلی سماعت اور براہ راست ٹی وی پر نشر کرنے پر بھی تیار ہیں، بے شک فارن فنڈنگ کیس ٹی وی پر براہ راست دکھا دیا جائے بلکہ پارٹی سربراہوں کو بٹھا کر کیس سنا جائے۔

شریفوں کی داستان دفن،مریم نے "تباہی” کی، شہباز گل کا دعویٰ

مینار پاکستان جلسہ،مریم نواز سمیت ن لیگی قیادت پر مقدمہ درج

چائے کی آفر مولانا کو ابھی، ہمیں کس چیز کی آفر ہوئی تھی؟ کیپٹن ر صفدر کا انکشاف

مریم نواز ہاتھ میں "گلاس”تھامے اچانک کہاں پہنچ گئیں؟

الیکشن کمیشن کے باہر رینجرز تعینات،پی ڈی ایم کی حکمت عملی تبدیل

مریم نواز نے اسلام آباد میں کس کو "دھوکا” دے دیا؟ تہلکہ مچ گیا

الیکشن کمیشن کے باہر احتجاج ،پی ڈی ایم کو مہنگا پڑ گیا،الیکشن کمیشن کا ایسا فیصلہ کہ مریم نے "سرپکڑ”لیا

فارن فنڈنگ کیس، سکروٹنی کمیٹی پر اعتراض ہے یا نہیں؟ تحریک انصاف نے عدالت میں بتا دیا

حکم دینے والا ہوں مجھے جواب دینے کی ضرورت نہیں،پی ٹی آئی فنڈنگ کیس میں کس نے ایسا کہا؟

پی ٹی آئی کونسے اکاؤنٹس کا ریکارڈ نہیں دے رہی،اکبر ایس بابرنے الیکشن کمیشن میں کیا کہا؟

اکبر ایس بابر کو مریم نوازکیا دیتی ہیں؟ فرخ حبیب نے لگایا بڑا الزام

فارن فنڈنگ کیس، سکروٹنی کمیٹی نے پی ٹی آئی کی استدعا مسترد کر دی

بہت تاخیر ہو چکی،سچائی تک پہنچنے کیلئے یہ کام کرنا چاہئے، فارن فنڈنگ کیس میں الیکشن کمیشن کے ریمارکس

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.