fbpx

سعودی عرب: اسلامی مالیاتی نظام مضبوط ہونے لگا:اثاثے 3 ٹریلین ریال ہوگئے

ریاض:سعودی عرب: اسلامی مالیاتی نظام مضبوط ہونے لگا:اثاثے 3 ٹریلین ریال ہوگئے ،اطلاعات کے مطابق سعودی عرب میں البرکہ فورم کا افتتاح کردیا گیا، مملکت میں اسلامی مالیات 7.2 ٹریلین ڈالر تک پہنچ گئی ہے۔

سعودی ویب سائٹ کے مطابق گورنر مدینہ منورہ کی نیابت کرتے ہوئے نائب گورنر شہزادہ سعود بن خالد نے البرکہ اسلامی اکنامک فورم کا افتتاح کردیا۔

اس کا عنوان ڈیجیٹل اکانومی اور مستقبل پر نظر ہے، اس میں سرمایہ کاری، فنڈنگ اور معیشت کے شعبوں کے ممتاز ماہرین شریک ہیں۔ مدینہ منورہ اسلامی یونیورسٹی کے سربراہ ڈاکٹر ممدوح بن سعود بن ثنیان آل سعود بھی سیمینار میں پیش پیش ہیں۔

البرکہ فورم کے چیئرمین عبداللہ صالح کامل نے استقبالیہ خطاب میں البرکہ سیمینار اور اس کی تاریخ کا تعارف پیش کیا۔

انہوں نے بتایا کہ 42 برس قبل معروف سعودی سرمایہ کار شیخ صالح کامل نے اس کا آغاز کیا تھا۔ انہوں نے اسلامی معیشت کے لیے صالح عبداللہ کامل ایوارڈ کا اعلان کیا تھا۔

البرکہ فورم کے چیئرمین نے توجہ دلائی کہ دنیا بھر میں اسلامی معیشت سے دلچسپی بڑھتی جا رہی ہے، مملکت نے اس حوالے سے جس حکمت عملی کا اعلان کیا ہے وہ بہت اعلیٰ درجے کی ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس کی بدولت مملکت اسلامی مالیاتی نظام کا عالمی مرکز بن رہی ہے، یہ سعودی مارکیٹ کی بڑھتی ہوئی عالمی اہمیت سے مناسبت رکھتی ہے۔

سینٹرل بینک کے گورنر کے سیکریٹری برائے تحقیقات و عالمی امور ڈاکٹر فہد الدوسری نے بھی سیمینار سے خطاب کیا، انہوں نے کہا کہ اسلامی مالیات 7.2 ٹریلین ڈالر تک پہنچ گئی ہے، مملکت میں اسلامی مالیاتی پروگرام کے اثاثے 3 ٹریلین ریال کے لگ بھگ ہیں۔ یہ شعبہ مملکت میں تیزی سے ترقی کر رہا ہے۔

زبانی نکاح،پھر حق زوجیت ادا،پھر شادی سے انکار،خاتون پولیس اہلکار بھی ہوئی زیادتی کا شکار

10 سالہ بچے کے ساتھ مسجد کے حجرے میں برہنہ حالت میں امام مسجد گرفتار

بنی گالہ کے کتوں سے کھیلنے والی "فرح”رات کے اندھیرے میں برقع پہن کر ہوئی فرار

ڈیجیٹل میڈیا ونگ ختم،ملک میں جاری انتشار اب بند ہونا چاہیے،وفاقی وزیر اطلاعات

پارلیمنٹ لاجز میں صفائی کرنے والے لڑکے کو مؤذن بنا دیا گیا تھا،شگفتہ جمانی