مروہ کے والدین کو پروگرام میں مدعو کرنے پر سیمی راحیل چینل اور شو سے منسلک افراد پر برہم

پاکستان کی سینئر اداکارہ سیمی راحیل نے نجی ٹی وی کے مارننگ شو کی میزبان اداکارہ ندا یاسرپر کراچی میں زیادتی کے بعد قتل ہونے والی 5 سالہ مروہ کے والدین کو پروگرام میں مدعو کرنے پر برہمی کا اظہار کیا ہے-

باغی ٹی وی : حال ہی میں نجی ٹی وی کے مارننگ شو کی میزبان اداکارہ ندا یاسر نے کراچی میں زیادتی کے بعد قتل ہونے والی 5 سالہ مروہ کے والدین کو پروگرام میں مدعو کرکے افسوسناک واقعے سے متعلق متعدد سوالات کیے جس پر سیمی راحیل نے اظہار برہمی کرتے ہوئے پیمرا سے شو کے خلاف نوٹس لینے کا مطالبہ کردیا ہے-

کراچی کے علاقے عیسٰی نگری میں 5 سالہ مروہ کو دو ملزمان نے زیادتی کا نشانہ بنایا اور لاش کچرا کنڈی میں پھینک دی تھی۔ اس دل سوز واقعے پر ہر دل دکھ سے بھرا ہوا ہے۔ ایسے میں ندا یاسر نے اپنے مارننگ شو میں مروہ کے والدین کو بلایا اور واقعے سے متعلق متعدد سوالات پوچھے۔

ندا یاسر نے اپنے پروگرام میں معروف سماجی کارکن صارم برنی اور ایک قانون دان کو بلایا۔ پروگرام کے دوران ندا یاسر نے واقعے سے متعلق والدین سے سوالات کئے جس پر برقع میں ملبوس مروہ کی دادی زار و قطار رونے لگیں اور ایک موقع پر خود ندا یاسر بھی اپنے جذبات پر قابو نہیں رکھ سکیں جس پر سوشل میڈیا صارفین نے برہمی کا اظہار کیا اور پیمرا سے شو کو بند کرنے کا مطالبہ کیا تھا تاہم اب اداکارہ سیمی راحیل نے بھی شو کے خلاف آواز اٹھائی ہے-

سماجی رابطے کی ویب سائٹ انسٹاگرام پر اپنی پوسٹ میں اداکارہ نے شو کی ایک تصوری شئیر کی اور کیپشن میں لکھا کہ ایک مارننگ شو میں زیادتی کے بعد قتل کی جانے والی پانچ سال کی بچی کے والدین کو فون کرنا !!! !!! ان سے تفصیل سے سوال کریں … اپنا درد دکھانا؟ آپ اس طرح کیسے کر سکتے ہیں آپ کتنے غیرانسانی اور بے حس ہوسکتے ہیں!؟


انہوں نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے لکھا کہ آر پی حاصل کرنے کے لئے آپ اس طرح لوگوں کے درد کو کم کرتے ہیں ؟

اداکارہ نے لکھا کہ اس طرح کے قابل رحم سلوک پرچینل اور شو سے منسلک سب افراد کو شرم آنی چاہئے!

انہوں نے اپنی پوسٹ میں پیمرا کو چینل کی اس حرکت پر نوٹس لینے کا مطالبہ کیا اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مجھے افسوس ہے کہ میں اس میڈیا کا حصہ ہوں-

زیادتی کے بعد قتل ہونے والی 5 سالہ مروہ کے والدین کو پروگرام میں مدعو کرنے پر صارفین ندا یاسر پر برہم

مروہ قتل کیس:شوبز فنکاروں کا ملک میں مجرموں کو سرعام پھانسی دینے کے قانون کا…

جنسی زیادتی میں ملوث افراد کو سرعام پھانسی دینی چاہئیے تاکہ انہیں دوسروں کے لیے مثال بنایا جاسکے اقرا عزیز

5 سالہ بچی کے قاتلوں کے لئے صرف پھانسی کی سزا کافی نہیں اُشنا شاہ

منیب بٹ ملکی حالات کے پیش نظر اپنی بیٹی امل کے لئے خوفزہ

ماہرہ خان کامن ویلتھ کی ٹیم کے ساتھ خواتین اور بچوں کے ساتھ ہونے والے جنسی ہراسانی…

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.