fbpx

سینیٹ انتخاب ویڈیو اسکینڈل ،الیکشن کمیشن نے بڑا فیصلہ سنا دیا

سینیٹ انتخاب ویڈیو اسکینڈل ،الیکشن کمیشن نے بڑا فیصلہ سنا دیا

الیکشن کمیشن ،سینیٹ انتخاب ویڈیو اسکینڈل پر یوسف رضا گیلانی کی نااہلی کیس کی سماعت ہوئی

الیکشن کمیشن نے یوسف رضا گیلانی کی نااہلی کی پی ٹی آئی کی درخواست خارج کردی ،چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ کیس کے بارے حقائق ٹھیک پیش نہیں کیے گئے، کیس کی 20 سماعتیں ہوئیں اور 12 بار ملتوی کرنے کی درخواست کی گئی کیس کا فیصلہ ایک مہینہ بھی محفوظ نہیں رہا،یوسف رضا گیلانی کیخلاف براہ راست کوئی شواہد نہیں،

الیکشن کمیشن نے علی حیدر گیلانی، فہیم خان اور کیپٹن جمیل کے خلاف کرپٹ پریکٹسز کے تحت کارروائی کرنے کا حکم دے دیا،ڈسٹرکٹ الیکشن کمشنر کو علی حیدر گیلانی کیخلاف کرپٹ پریکٹس کا مقدمہ درج کرانے کا حکم بھی دیا

پی ٹی آئی کے فرخ حبیب، ملیکہ بخاری، کنول شوذب اور عالیہ حمزہ نے درخواستیں دائر کی تھیں الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ یوسف رضا گیلانی کیخلاف براہ راست کوئی شواہد نہیں، وہ سینیٹر رہیں گے، الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی درخواستوں پر محفوظ شدہ فیصلہ سنا دیا

ڈر اور کسی خوف میں حکومت نہیں کر سکتا،وزیراعظم کا دبنگ اعلان

سینیٹ انتخابات اور اعتماد کے ووٹ کے بعد کابینہ میں رد و بدل کا امکان،ایم کیو ایم کی بھی "ڈومور”

مریم نواز نے یوسف رضا گیلانی کو مشکل میں پھنسا دیا

اب نہیں تو کبھی نہیں، گیلانی کے خلاف پی ٹی آئی نے بڑا قدم اٹھا لیا

گیلانی نااہلی کیس،الیکشن کمیشن میں کون ابھی تک پیش نہ ہوا؟

گیلانی کی نااہلی کی درخواست، الیکشن کمیشن نے کس کو دے دیا بڑا جھٹکا؟

ویڈیواسکینڈل ،ویڈیو میں کون کون؟ نام الیکشن کمیشن میں پیش،کیس کہاں بھجوا سکتے ہیں؟ ای سی پی کے اہم ریمارکس