fbpx

غلط علاج، شہری ہسپتال کے خلاف عدالت پہنچ گیا، 49 لاکھ روپے کا دعویٰ دائر

کراچی : شہری نجی اسپتال کے خلاف صارفین کے تحفظ کی عدالت پہنچ گیا.

باغی ٹی وی : تفصیلات کے مطابق شہری نے غلط علاج کرنے پر اسپتال کے خلاف49 لاکھ روپے سے زائد ہرجانے کا دعوی دائر کردیا صارفین کی عدالت نےنجی اسپتال کو نوٹس جاری کردیا۔

صارف عدالت ضلع جنوبی میں شہری کامران فرید نے موقف اختیار کیا ہے کہ اس کے والد جگر کے عارضے میں مبتلا تھے 7 جون کو مریض کو نجی اسپتال لایا گیااسپتال کے عملے اور ڈاکٹر نے انہیں بتایا گیا کہ ان کے والد کو ٹائیفائڈ ہوگیا ہے ہم سے جگرکے عارضے کی رپورٹ چھپائی گئی 7 روزانہیں اسپتال میں رکھنے کے بعد ڈسچار ج کیا گیا لیکن ان کی حالت میں بہتری نہیں آئی۔

ملک میں پانی کی بڑھتی ہوئی قلت سے نمٹنے کیلئے آبپاشی کے متبادل طریقے اختیار کرنے…

درخواست گزارکے مطابق مریض اسپتال میں چیک اپ کراتا رہا 26 جون کو انہیں دوبارہ ایڈمٹ کرلیا گیا اور40 دن بعد بتایا گیا کہ مریض کوجگر کی بیماری ہے

شہری کا کہنا ہے کہ اسپتال انتظامیہ نے غلط بیانی کی اور مریض سے غلط علاج کے بہانے لاکھوں روپے وصول کیے ہرجانےکے دعوی میں موقف اپنایا گیا ہے کہ مریض کی جان کو خطرے میں ڈالا گیا نجی اسپتال پر جرمانہ عائد کیا جائے۔

ملکی دولت بڑھانے کے لیے صنعتوں اور سیاحت پر توجہ دینی ہو گی عمران خان