محنت کرنی چاہئے، صلہ اللہ کے ہاتھ میں ہے،بلاول بھٹو

مسلم لیگ (ن) طاقت کے نشے میں ملک کو تقسیم کر رہی ہے
0
117
bilawal

کراچی: پاکستان پیپلز پارٹی کے چئیرمین بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ نواز شریف وزیراعظم بنے تو انہوں نے پھر انتقام کی سیاست شروع کردینی ہے-

باغی ٹی وی: لاڑکانہ میں انتخابی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ لاڑکانہ کے عوام کا شکر گزار ہوں، لاڑکانہ نے ہمارے خاندان کے ساتھ وفاداری نبھا کر تاریخ رقم کی ہے لاڑکانہ وزیراعظم بناتا ہے تو پاکستان ایٹمی طاقت بن جاتا ہے، لاڑکانہ وزیراعظم بناتا ہے تو پھر پاکستان مسلم امہ کی قیادت کرتا ہےجب لاڑکانہ وزیراعظم بناتا ہے تو پوری دنیا اس کی بات مانتی ہے، لاڑکانہ وزیراعظم بناتا ہے تو پسماندہ طبقات کی نمائندگی ہوتی ہے۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ مشکل سے نکلنے کیلئے پیپلز پارٹی کو ووٹ دینا ہوگا، یہ لوگ جیت گئے تو ایک بار پھر دھرنے کی سیاست ہوگی، یہ لوگ جیت کر سیاسی مخالفین کے ساتھ پکڑ دھکڑ کریں گے، جنہوں نے حکومت دی یہ انہیں سے لڑ پڑے، ان کی وجہ سے جمہوریت اور پاکستان کا ہوا،نقصان پاکستانی معیشت اور عوام کا ہواوہ ایک بار پھر وزیراعظم بننے کیلئے دباؤ ڈال رہے ہیں ان کی وجہ سے جمہوریت اور پاکستان کا ہوا، نقصان پاکستانی معیشت اورعوام کا ہوا۔

پی ٹی آئی کے ورکرز کو پیغام دیتی ہوں، نفرت کی سیاست کو دفن کر …

انہوں نے کہا کہ چوتھی بار وزیراعظم بننے کے بعد بھی انہوں نےرونا ہی ہے،چھ مہینے بعد پھر یہی ہونا ہے کہ مجھے کیوں نکالا، مجھےکیوں بلایا آپ نے 8 فروری کو انہیں منہ توڑ جواب دینا ہے8 فروری کو تیر پر مہر لگا کر شیر کا راستہ روکنا ہے یہ شیر کسانوں، مزدوروں اور غریبوں کا خون چوستا ہے ہم نے ملک کو جوڑنا ہے، تقسیم نہیں کرنا، مسلم لیگ (ن) طاقت کے نشے میں ملک کو تقسیم کر رہی ہے، کوئی مذہب اور کوئی لسانیت کے نام پر تقسیم چاہتا ہے، ہم 8 فروری کو ا ن سب کو جواب دیں گے، ہم اس ملک کو تقسیم نہیں کرنے دیں گے ہم نے پاکستانی عوام کو ریلیف دینا ہے، ریلیف دینے کیلئے عوامی معاشی معاہدے میں سب بتا دیا ہے، پاکستان کو مشکل معاشی فیصلے لینا ہوں گے، ہم وفاق سے 17 وزارتوں کو ختم کریں گے۔

کسی کو بھی الیکشن کے دن قانون ہاتھ میں …

انہوں نے کہا کہ ہم اشرافیہ کی سبسڈی ختم کردیں گے، ہم عام آدمی کی آمدنی میں اضافہ کریں گے، ہم سولر سسٹم سے 300 یونٹ تک بجلی مفت دیں گے، غریب عوام کیلئے 30 لاکھ گھر بنائے جائیں گے، ملک بھر کی کچی آبادیوں کو ریگولائز کروائیں گے، بےنظیر انکم سپورٹ پروگرام میں اضافہ کریں گے، نوجوانوں کیلئے بےنظیر یوتھ کارڈ لائیں گے، مزدوروں اور کسانوں کیلئے بھی کارڈز لائیں گے، ہم ملک بھرمیں بھوک مٹاؤ پروگرام شروع کریں گے، بچوں کو اسکولوں میں کھانا کھلایا جائے گا، تعلیم اور صحت کارڈ پر کام شروع کردیا ہے، ہمیں موقع ملا تو عوامی معاشی معاہدہ پرعمل کریں گے میں باقی سیاستدانوں کی طرح ذاتی انا کی سیاست نہیں کرتا، میراماننا ہے کہ محنت کرنی چاہئے، صلہ اللہ کے ہاتھ میں ہے۔

امریکی ڈالر سستا،سونے کی قیمت میں اضافہ

Leave a reply