fbpx

کراچی سمیت سندھ بھر میں ڈینگی کیسز میں تیزی سے اضافہ

پنجاب کے بعد کراچی سمیت سندھ بھر میں ڈینگی کیسز میں تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے-

باغی ٹی وی:تفصیلات کے مطابق ڈینگی کیسز نے خطرناک صورتحال اختیار کرلی ہے ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ احتیاط نہ کی گئی تو یہ بھی وبائی مرض کی شکل اختیار کرجائے گا۔

رواں ماہ اب تک صرف محکمہ صحت کے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق صوبہ بھر میں ڈ ینگی کیسز کی تعداد1600سے تجاوز کرچکی ہےماہرین صحت نے اس صورتحال کو خطرناک قرار دیا ہے.

60 فیصد آبادی کی ویکسین مکمل:این سی او سی کا شہروں میں کورونا پابندیا‏ں مکمل طور…

ماہرین صحت کے مطابق ڈینگی کی صورتحال کو کنٹرول کرنا صرف حکومت کی ہی ذمہ داری نہیں بلکہ یہ ایک مشترکہ ذمہ داری ہے،ڈینگی کیسز کے ساتھ ساتھ ملیریا اور ٹائیفائیڈ کے کیسز بھی تیزی سے رپورٹ ہورہے ہیں اور کراچی میں مختلف ہسپتالوں میں بخار سے متاثرہ مریضوں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ سامنے آیا ہے۔

نریندرمودی نے پاکستانی فضائی حدود کا استعمال کیا

ماہرین صحت نے ڈینگی، ملیریا اور ٹائیفائیڈ سے متعلق ایک مربوط اور مشترکہ پروگرام تشکیل دینے پر زور دیا ہے۔ ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ ڈینگی وائرس کی اقسام میں ڈین وی ون، ٹو، تھری اور فور شامل ہیں، ڈینگی مچھر پانی میں افزائش پاتا ہے۔

کورونا کے باوجود پاکستان کی معشیت بحال ہوئی اسٹیٹ بینک آف پاکستان

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!