سندھ ہائی کورٹ میں طیارے گراؤنڈ کرنے کے لئے درخواست دائر،سول ایوی ایشن اورپی آئی اے سے جواب طلب

کراچی :سندھ ہائی کورٹ میں پی آئی اے کے طیارے گراؤنڈ کرنے کے لئے درخواست دائر،سول ایوی ایشن اورپی آئی اے سے جواب طلب ،اطلاعات کے مطابق کراچی طیارہ حادثے کے بعد سندھ ہائی کورٹ میں پی آئی اے کے طیارے گراونڈ کرنے کے لئے درخواست دائر کر دی گئی ہے۔ درخواست میں وفاقی حکومت اور متعلقہ اداروں کو فریق بنایا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق عدالت نے ڈائریکٹر سول ایوی ایشن اور چیئرمین پی آئی اے سے جواب طلب کر لیا۔ درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ طیارے گزشتہ دور حکومت میں خریدے گئے تھے جو کہ اب اپنی درست حالت میں موجود نہیں ہیں، اس لئے تمام طیاروں کی مکمل انسپیکشن کی جائے اور اس کی بعد انہیں اڑنے کی اجازت دی جائے۔

واضح رہے کراچی ایئرپورٹ کے قریب عید سے 2 دن قبل دوپہر سوا دو بجے کے قریب پی آئی اے کی فلائٹ پی کے 8303 گر کر تباہ ہوگئی تھی۔ایئربس میں 107 افراد سوار تھے جن میں 99 مسافر اور عملے کے 8 افراد شامل تھے۔
ایئربس 320 ایک بج کر 10 منٹ پر لاہور ایئرپورٹ سے کراچی کے لیے روانہ ہوئی تھی۔ پی آئی اے کی پرواز لاہور سے کراچی پہنچی تھی کہ لینڈنگ سے قبل طیارہ گر کر تباہ ہو گیا تھا۔

تحقیقات کےعلاوہ اب اس معاملے میں سندھ ہائیکورٹ میں بھی طیارے گراؤنڈ کرنے کے لئے درخواست دائر کروا دی گئی ہے جس میں وفاقی حکومت کو فریق بنایا گیا ہے۔ یاد رہے کہ اس درخواست کے بعد عدالت نے ڈائریکٹر سول ایوی ایشن اور چیئرمین پی آئی اے سے جواب طلب کر لیا ہے۔ درخواست میں طیاروں کی حالت کے حوالے سے تشویش کا اظہار کیا گیا ہے جس کے بعد مطالبہ کیا گیا ہے کہ طیاروں کی مکمل انسپیکشن کے بعد انہیں اڑنے کی اجازت دی جائے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.