fbpx

سندھ حکومت نے شادی ہال مالکان کو بڑی خوشخبری سنادی

تفصیلات کے مطابق رات گئے پاکستان کیٹرز ڈیکوریٹرز ایسوسی ایشن کے وفد نے وزیربلدیات سندھ ناصر شاہ سے ملاقات کی اور انہیں بتایا کہ شادی ہالز بند ش سے کئی افراد بے روزگارہوگئے، جس کے باعث ہزاروں افراد کے گھروں کے چولہے ٹھنڈے پڑ گئے ہیں۔
اس موقع پر ناصر حسین شاہ نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ شادی ہالز کی بندش کا سخت فیصلہ مجبوری میں کیاتھے، حکومت سندھ کو آپ کی تکالیف کا احساس ہے۔
ملاقات میں چیئرمین بینکوئٹ ہال ایسوسی ایشن نے صوبائی وزیر سے مطالبہ کیا کہ شادی ہالزکو ایس او پیز کےساتھ کھولنےکی اجازت دی جائے، جس پر ناصر حسین شاہ نے چھ جون سےشادی ہال کھولنےکی یقین دہانی کرائی۔
گذشتہ روز ہی صدر آل سٹی تاجراتحاد حمادپونا والا کی سربراہی میں وفد نے صوبائی وزیر ناصر شاہ سے ملاقات کی اور سندھ حکومت سے کاروباری اوقات کار شام چھ کے بجائے رات آٹھ بجےتک کرنے کی اپیل کی، ملاقات میں حمادپونا والا نےمطالبہ کیا کہ سیل کیے گئے شاپنگ مالز، دکانوں،شادی ہالز کو بھی ڈی سیل کیاجائے۔
دوسری جانب کراچی ریسٹورنٹ ایسوسی ایشن نے ریسٹورنٹس بندش اور ملازمین کی گرفتاریوں کیخلاف احتجاج کیا، ریسٹورنٹ ایسوسی ایشن نے الزام عائد کیا کہ لاک ڈاؤن کے دوران انتظامیہ اور پولیس کا رویہ انتہائی غیرمہذب ہے، ہمارا مطالبہ ہے کہ سیل کئے گئے ریسٹورنٹس کھولے جائیں اور گرفتار ملازمین کو فوری طور پر رہاکیا جائے۔
ریسٹورنٹ ایسوسی ایشن سندھ حکومت سےڈائننگ کی اجازت دینےکا مطالبہ کیا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.