fbpx

آریان خان کو گرفتارکرنے والے این سی بی افسر کےمذہب پرتنازع زیربحث

منشیات کیس میں شاہ رخ کے بیٹے آریان کو گرفتار کرنے والے نارکوٹکس کنٹرول بیورو (این سی بی) کے افسر سمیر وانکھیڈے نت نئے تنازعات کی وجہ سے مسلسل شہ سُرخیوں میں ہیں‌-

باغی ٹی وی : بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق سمیر وانکھیڈے کا مذہب سے متعلق تنازع اس وقت سے بھارتی میڈیا میں زیر بحث ہے جب ایک مقامی قاضی مزمل احمد نے دعویٰ کیا ہےکہ انہوں نے سمیر وانکھیڈے کا نکاح پڑھایا تھا جب کہ نکاح کے وقت سمیر وانکھیڈے اور ان کی پہلی اہلیہ دونوں مسلمان تھے۔


بھارتی میڈیا کے مطابق قاضی مزمل احمد نے ریاست مہاراشٹرا کے وزیر نواب ملک کی جانب سے ٹوئٹر پر شیئر کیے گئے اس نکاح نامے کو درست قرار دیا جس میں نواب ملک نے دعویٰ کیا ہےکہ یہ نکاح نامہ سمیر وانکھیڈے کا ہے۔

آریان خان کیس میں تازہ ترین پیشرفت : این سی بی آفیسرسمیر واکھنڈے مشکل میں پڑ گئے

قاضی مزمل احمد نے اپنے دعوے میں کہا ہےکہ سمیر وانکھیڈے کا نکاح 2006 میں ہوا تھا جس میں کئی بااثر افراد نے شرکت کی تھی جب کہ ان کی شادی مکمل اسلامی رسومات کے مطابق ہوئی تھی۔


بھارتی ریاست مہاراشٹرا کے وزیر نواب ملک نے اپنی ٹوئٹ میں دعویٰ کیا تھا کہ سمیر وانکھیڈے مذہب تبدیل کرکے مسلمان ہو چکے ہیں۔

دوسری جانب سمیر وانکھیڈے نے ان تمام الزامات کی تردید کرتے ہوئے کہا کہ یہ ان کی والدہ کی خواہش تھی کہ ان کی شادی مسلمان رسومات کے مطابق یو-

سمیر وانکھیڈے کے مطابق ان کے والد کا تعلق ہندو مذہب سے تھا البتہ ان کی ماں مسلمان خاتون تھیں۔

نارکوٹکس کنٹرول بیورو کی آریان خان کی درخواست ضمانت کی مخالفت

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!