fbpx

مجھے نہیں سمجھ آتی کہ ٹیم سے مجھے کیوں ڈراپ کیا گیا،عماد وسیم

قومی کرکٹ ٹیم کے آل راؤندڑ عماد وسیم نے کہا ہے کہ ورلڈ کپ کے بعد سے میں کوئی میچ نہیں کھیلا، مجھے نہیں سمجھ آتی کہ ٹیم سے مجھے کیوں ڈراپ کیا گیا-

باغی ٹی وی : کرکٹ پاکستان کو دیئے گئے انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ مجھے ٹیم سے ڈراپ کرنے کی کوئی وجوہات نہیں بتائی گئی اور جو کچھ بھی کہا گیا اس سے میں غیر مطمئن ہوں سنٹرل کانٹریکٹ کے اعلان کے بعد میں نے خود ٹیم انتظامیہ سے رابطہ کیا تھا، بعض اوقات وہ مجھے جواب دے دیتے ہیں اور کبھی نہیں بھی دیتے۔

نواک جوکوویچ نے ومبلڈن کا ٹائٹل ساتویں مرتبہ جیت لیا

عماد وسیم نے کہا کہ میری عمر 33 برس ہے ابھی میرے میں بہت کرکٹ باقی ہے، میں مزید چار پانچ سال کھیلنا چاہتا ہوں پسند نا پسند ہر جگہ ہوتی ہے یہ نیچرل ہے لیکن میری درخواست ہے کہ ٹیم کے انتخاب سے قبل کھلاڑی کی صلاحیتوں کو ضرور مندنظر رکھا کریں۔

ان کا کہنا تھا کہ بابراعظم کو کراچی کنگز کی کپتانی دیئے جانے سے پہلے مجھ سے مشاورت کی گئی تھی۔

سری لنکا اور آسٹریلیا کے درمیان گال ٹیسٹ کے دوران طوفانی بارش،گرینڈ اسٹینڈ گر گیا