fbpx

سوشل میڈیا کے مثبت استعمال .تحریر:فروا نذیر

Twitter id: @InvisibleFari_

سوشل میڈیا نے معاشرے میں بہت ترقی پائی ہے
آجکل یہ سمجھ لیں کہ سوشل.میڈیا بغیر دنیا نامکمل ہے
اور اسی سوشل میڈیا کو انسان اپنے مقصد کیلیے بھی استعمال کرتا ہے
کوئی بھی انسان کچھ بھی بلاوجہ استعمال نہیں کرتا اسکو اپنے مقصد کو لاتا اور کوشش کرتا ہےکہ اس مقصد کو پورا کیا جائے

سوشل میڈیا کے بہت سے اثرات ہوتے ہیں ہرعمر کے انسان پر چاہے وہ بچہ ہو جوان ہو بڑا ہو
اور اسی طرح کے اس کے مثبت اثرات بھی ہیں جو انسان کی زندگی میں بہت تبدیلی لاسکتا ہے اگر ہم اسکو اچھی نیت سے استعمال کریں

کچھ بھی کرنے کیلیے ہماری نیت صاف ہونی چاہیے اور ہر اس کام کو عمل میں پہلے خود لے کر آنا چاہیے جسے ہم سوشل میڈیا پر لاتے ہیں
تاکہ ہم سب کو اندازہ ہو کونسے کام کو کہاں کیسے اور کسطرح استعمال میں لانا ہے..

اس طرح سمجھ لیں کہ انسان اگر اپنا آپ دکھانا چاہتا ہے تو وہ سوشل میڈیا پر جائے گا سوشل میڈیا میں صرف کوئی ایک ایپ نہیں ہے بے تحاشا ایپس ہیں جن کا استعمال مفاد کیلیے اور مثبت انداز میں ہو رہا ہے
جن میں سے چند یہ ہیں:
• واٹس ایپ
• ٹویٹر
• انسٹاگرام
• فیسبک
• سکائپ
وغیرہ وغیرہ یہ سب سوش میڈیا کی اقسام ہیں
سب کے فائدے کیا کیا ہیں:

– واٹسایپ
واٹس ایپ ہر انسان کہ ضرورت ہے اس سے آپ کسی بھی وقت کہی بھی رابطہ کر کے اہنا کام کر سکتے ہو
یہ آہکو رشتہ داروں سے بات کرنے کے مواقع بھی دیتی ہے اور اپنی فیملی سے جڑے رہنا ایک بہت اچھا کام ہے کیونکہ ہم سب کو ہمیشہ مل جل کے رہنا چاہہے تاکہ مشکل وقت میں ایک دوسرے کے کام آسکیں..

– ٹویٹر
ٹویٹر کے جہاں نقصان وہی بہت سے فوائد ہیں.
آپ کو دنیا کی ہر خبر ٹویٹر سے مل سکتی یے آپ نے ڈائریکٹ اگر کسی سیاستدان سے بات کرنی تو ٹویٹر سب سے بیسٹ آپشن ہے آپ کسی مشکل میں ہیں ٹویٹر پر صرف ایک ٹرینڈ چلائے اور وزیراعظم کو مینشن کرتے جائے آہکا کام ہو گا
ہر طرح کے لوگ ہیں ٹویٹر پر جن سے آپ رابطہ کر کے بہت کچھ سیکھ سکتے ہو صرف ایک ٹویٹر ایسی ایپ ہے جو آہکو بہت کچھ سکھاتی رہتی یے

– انسٹاگرام
یہ ایپ ٹویٹر سے زیادہ استعمال میں ہے لیکن اس کا اتنا فائدہ نہیں جتنا ٹویٹر ہے وہاں آپ آواز بلند کر سکتے ہو لیکن انسٹا پر اہسا کچھ نہیں ہوتا
انسٹا بھی اپنی جگہ مفید ہے کچھ یوتھ کیلیے جن کو ڈراماز شوبز والوں سے ملنے کا شوق ہو وہ سب انسٹا کو جوائن کرتے ہیں اس لیے ہر چیز کا کسی نہ کسی کیلیے فائدہ ہے

– فیسبک
فیسبک ایک بہت ہی پرانی اور مفید سوشل ایپ ہے جہاں بہت سے مسائلز کو سامنے لایا جاتا پاکستان کے بارے میں
انڈیا کے پروپیگنڈاز بھی سامنے آتے ہیں ٹویٹر والے ان سب پروپیگنڈوز کو اجاگر کرتے ہیں اور فیسبک سے انکی شروعات ہے… بہت سے لوگ آج بھی فیسبک پر زیادہ ہیں خاص کر یوتھ وہاں سے بہت کچھ حاصل کر رہی ہے

– سکائپ
سکائپ کا یہ فائدہ کہ آپ دنیا کے جس بھی کونے میں بیٹھے ہو اہنے عزیز کو باآسانی دیکھ سکتے ہو باآسانی بات کر سکتے ہو
اسکو بہت سے فارن لوگ استعمال کرتے ہیں خاص کر وہ جو اونلائن جاب کرتے ہو وہ اسکو ویڈیو پر بات چیت کیلیے استعمال کرتے ہیں
اسکا استعمال پہلے کی نسبت کم ہوتا جارہا ہے کیونکہ واٹسایپ سے ویڈیو کالز ہوجاتی ہیں

جس طرح ہر چیز کے بننے کا کوئی نہ کوئی فائدہ ہے اسی طرح ہر سوشل ایپ کا اپنی جگہ فائدہ اور استعمال ہے

لیکن کوشش رہے سوشل میڈیا کو مثبت انداز میں استعمال کریں تاکہ مشکلات سے بچ سکیں اور بہت کچھ سیکھ سکیں