fbpx

دبئی :سوشل میڈیا پر وسیع پیمانے پر فحش فلم شیئر کرنیوالا گروہ گرفتار

دبئی پولیس نے سوشل میڈیا پر وسیع پیمانے پر فحش فلم شیئر کرنیوالا گروہ گرفتار کر لیا-

باغی ٹی وی : میڈیا رپورٹس کے مطابق دبئی میں ایک گروہ کی طرف سے وسیع پیمانے پر ایک ویڈیو شیئر کی گئی جس میں برہنہ خواتین کو شہر میں ایک بالکونی میں کھڑے دکھایا گیا-

فوٹوشوٹ میں شامل پندرہ ماڈلز ایک اسرائیلی ویب سائٹ کے پبلسٹی سٹنٹ کا حصہ تھیں ،مذکورہ ویب سائٹ بالغ افراد کیلئے ہے جس کا نام نہیں لیا گیا،دبئی کے شہر مارینا پڑوس میں دن کی روشنی میں فلمائے جانے والے فحش سین کیلئے ایک درجن سے زائد خواتین کو بلند عمارت کی بالکونی میں کھڑا کیا گیا بعد ازاں ویڈیو اور تصاویر بنا کر سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کی گئیں-

دبئی پولیس کے مطابق فحش ویڈیو پھیلانے کے الزام میں گرفتار افراد کو سرکاری استغاثہ کے حوالے کردیا گیا ہے، پولیس نے واقعہ کی بھر پور مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اماراتی معاشرے میں اس طرح کی فحش حرکتیں اقدار اور اخلاقیات کی عکاسی نہیں کرتیں بلکہ اخلاقیات کو مجروح کیا گیا ہے-

واضح رہے کہ متحدہ عرب امارات مشرق وسطی کے پڑوسی ممالک کے مقابلے میں بہت سارے معاملات میں لبرل ہے، اظہار خیال پر حکمرانی کے سخت قوانین ہیں ملک کی اکثریتی سرکاری ٹیلی کام کمپنیوں نے بڑی بڑی فحش ویب سائٹوں تک رسائی روک رکھی ہے-

دبئی میں فحاشی و عریانی کو فروغ دینے والوں کے لیے سخت ترین قوانین متعارف کرائے گئے ہیں، پولیس کی طرف سے گرفتار افراد کے خلاف مقدمہ چلا کر انہیں اسلامی قوانین کے مطابق سخت سزائیں دیئے جانے کی توقع ہے ۔

عریانی و فحاشی پھیلانے کے الزام میں دبئی کے قوانین کے مطابق چھ ماہ تک کی قید اور 5ہزار سعودی درہم جرمانے کی سزا مقرر ہے، جبکہ فحش مواد پھیلانے کے جرم میں مذکورہ گروہ کو بھی اسلامی قوانین یا شریعت پر مبنی لاء کے مطابق سخت ترین سزائوں کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.