fbpx

سونے کے زیورات چمکائیں اب گھر میں

سونے کے زیورات چمکائیں اب گھر میں
جو خواتین باقاعدگی سے سونے کے زیورات پہنتی ہیں ان کے زیورات آب و ہوا کی نمی اور مٹی کی وجہ سے اپنی اصلی چمک آہستہ آہستہ کھونے لگتے ہیں یہی وجہ ہے کہ جب کوئی قریبی شادی کی تقریب آنے لگتی ہے تو خواتین کے ذہن میں سب سے پہلے زیورات پالش کروانے کا خیال آتا ہے تاکہ وہ دوبارہ سے چمک اٹھیں آج کل چونکہ مہنگائی کا دور دورہ ہے ایسے میں خواتین کی یہی کوشش ہوتی ہے کہ کسی طرح ان کے پیسے بچ جائیں اب چونکہ سونے کے زیورات کی پالش پر بھی دو ہزار سے کم کا خرچہ نہیں آتا آج کل ویسے بھی سونا اتنا مہنگا ہو گیا ہے کہ زیورات کو خواتین کسی جیولر کے پاس پالش کے لیے چھوڑنے کا بھی رسک نہیں لینا چاہتیں ان کی یہی کوشش ہوتی ہے کہ کسی طرح سے ان کے سونے کے زیورات بھی چمک جائیں اور زیادہ خرچہ بھی نہ کرنا پڑے ایسے میں کچھ طریقے درج ذیل ہیں جن کی مدد سے خواتین گھر بیٹھ کر ہی اپنے سونے کے زیورات کو پھر سے چمکا سکتی ہے

ہر کام شروع کرنے سے پہلے بسم اللہ الرحمٰن الرحیم پڑھناچاہئے


کسی پیالے میں تھوڑا سا گرم پانی ڈالیں اس میں چند قطرے ڈش واشنگ لیکویڈ کے ڈالیں اور اچھی طرح دونوں چیزوں کو مکس کریں جب جھاگ بن جائے تو اس میں تمام سونے کے زیورات ڈال دیں ان زیورات کو پندرہ منٹ کے لیے اسی پیالے میں رہنے دیں اس کے بعد کسی نرم۔دندانے والے برش کی مدد سے اسے رگڑ یں اس کے بعد سادہ پانی سے دھو لیں اور کسی کپڑے سے خشک کر لیں
پانی کو اُبال کر کسی پائرکس ڈش میں یہ گرم پانی ڈالیں اس میں سونے کے زیورات ڈال دیں ان زیورات کو پانی ٹھبڈا ہونے تک اسی ڈش میں کم از کم پانچ منٹ رکھے رہنے دیں جب پانی ٹھنڈا ہو جائے تو ایک ایک کر کے تمام زیورات کو کسی نرم۔برش سے رگڑ کر تولئے سے صاف کر یں پھر اسے سوکھنے کے لیے رکھ دیں جب خشک ہو جائیں تو استعمال کریں گرم پانی میں بس ایسے سونے کے زیورات ڈالیں جس میں نگینے یا پرل موتی جڑے ہوئے نہ ہوں کیونکہ اگر نگینے جڑے ہوئے زیورات کو گرم پانی میں زیادہ دیر رکھا جائے تو ان نگینوں کو نقصان پہنچنے کا خدشہ رہتا ہے

آنکھوں کی کمزوری اور بینائی کے لئے انتہائی مجرب عمل


اگر ڈش واشنگ لیکویڈ سے زیورات صاف نہ ہوں تو پھر امونیا کی مدد سے ان زیورات کوچمکانے کی کوشش کر یں ایک پیالے میں مگرپانی لیں اس میں ایک سےچمچ دو کھانے کے چمچ امونیا ڈالیں دونوںچیزوں کو اچھی طرح مکس کریں اس پیسٹ کو سونے کے زیورات پر لگا ئیں صرف ایک منٹ لگا ئیں اور پھر اسے سادے پانی سے دھو لیں یاد رکھیں کہ امونیا والا مکسچر ایک منٹ سے زائد نہ لگا ے رکھیں دھونے کے بعد جیولری کو کسی تولےیا کپڑے سے صاف ضرور کریں اس مکسچر سے زیورات با زار کی پالش کی طرح ہی چمک اٹھیں گے تاہم جیولرز کا کہنا ہے کہ امونیا کی۔مدد سے اگر چنددنوں میں کئ مرتبہ زیورات صاف کر لئے جائیں تو پھر سونے کو نقصان پھنچ سکتا ھے کیونکہ امونیا کی وجہ سے دھات یعنی سونا پگھلنے لگتا ھے
دو کھانے کے چمچ پانی میں تھوڑا سا ٹوتھ پیسٹ ڈالیں اب اس مکسچر کو برش پر لگائیں اور پھر برش سے سونے کی۔جیولری کر رگڑیں اس کے بعد کسی کپڑے سے صاف کرنے کے بعد جیولری کو واش کر لیں آخر میں اسے کسی تولیے کی۔مدد سے خشک کر لیں ٹوتھ پیسٹ میں موجود اجزاء سونے کے زیورات کو چمکانے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں جب بھی سونے کی جیولری کو دھوئیں تو اس کے نیچے کوئی چھلنی وغیرہ ضرور رکھیں کیونکہ کبھی کبھار پانی کے پریشر سے کوئی چھوٹا سا جیولری آئٹم گر بھی سکتا ہے اگر نیچے کہ جانب چھلنی نہیں ہو گی تو آپ کے سونے کا کوئی چھوٹا ٹاپس ناک کی۔لونگ وغیرہ گم بھی سکتی ہے
کسی بھی صابن کو کدو کش کر لیں کدو کش کی گئی تھوڑی سی صابن کو پانی میں ڈالیں اب اسے چولہے پر رکھ کر بوائل کریں اس کے بعد اسے چولہے سے اتار لیں جب مکسچر ٹھنڈا ہو جائے تو زیورات اس مکسچر میں ڈالیں پھر کسی برش کی مدد سے ان زیورات کو اچھی طرح رگڑیں پھر زیورات کو دھو لیں اور تولئے سے خشک کر کے ہوا میں سوکھنے کے لیے رکھ دیں سونے کے زیورات کو صاف کرنے کے لیے کسی نوکیلے دندانوں والا برش ہر گز استعمال نہ کریں کیونکہ اس سے زیورات یا نگینوں پر خراشیں یا لائنیں پڑ جانے کا خدشہ ہے اس لیے نرم دنداے والے برش استعمال کریں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.