سرینگر،ظالم بھارتی فوج نے تین طلبا شہید کر دیئے

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج نے تین طلبا کو شہید کر دیا

مقبوضہ جموں و کشمیر کے دارالحکومت سرینگر کے مضافاتی علاقہ عمرآباد میں گزشتہ روز شروع ہوئے آپریشن میں تین نوجوان حریت پسند شہید ہوگئے ۔جن کے اہل خانہ نے سرینگر میں احتجاج کیا ہے اور کہا ہے کہ یہ تین نوجوان، زبیر، اعجاز اور مشتاق طالبعلم تھے جو اپنے فارم جمع کروانے گھر سے نکلے تھے۔

بھارتی فوج نے دعویٰ کیا کہ عسکریت پسندوں کو شہید کیا تا ہم شہید ہونے والے نوجوانوں کے والدین حقیقت سامنے لے آئے، انہوں نے بتایا کہ ہمارے بیٹے طالب علم تھے جو گھر سے نکلے اور انہیں بھارتی ظالم فوج نے شہید کر دیا

تینوں نوجوانوں کا تعلق شوپیاں اور پلوامہ سے تھا اور وہ سری نگر میں تعلیم کی غرض سے ٹھہرے ہوئے تھے۔ نوجوانوں کی شہادت کے بعد اہلخانہ نے نے بھارتی فوج کی جارحیت کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا اور جدوجہد آزادی کشمیر کے حق میں نعرے لگائے۔ مظاہرین کی طرف سے مطالبہ کیا گیا کہ شہید کیے گئے نوجوانوں کی میتیں ہمارے حوالے کی جائیں۔

اعجاز مقبول کے اہل خانہ نے بتایا کہ وہ کشمیر یونیورسٹی میں امتحان دینے کے لیے گھر سےگیا تھا جس کے بعدظالم فوج نے اسے شہید کر دیا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.