fbpx

سٹیج سے شائقین بالکل خفا نہیں نسیم وکی

گزشتہ روز نسیم وکی کی انڈین پنجابی فلم ”ماں دا لاڈلا” کی لاہور میں سکریننگ ہوئی، سکریینگ میں انہوں نے صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ایسی بات بالکل نہیں ہے کہ ڈرامہ شائقین سٹیج سے خفا ہو کر گھر بیٹھ گئے ہیں. ایک وقت تھا جب لاہور میں دو تین تھیٹر ہوا کرتے تھے آج ان کی تعداد کافی بڑھ چکی ہے. ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ جب کوئی چیز اچھی چل رہی ہو تو لوگ اس کا حصہ بنتے جاتے ہیں جب نہ اچھی چل رہی ہو تو لوگ اس میں سے نکلتے جاتے ہیں. تو بہت سارے آرٹسٹ سٹیج کرتے رہے اور بہت ساروں نے چھوڑ بھی دیا لیکن سٹیج آج

تک چل رہا ہے اور لوگ اسے پسند کررہے ہیں. فیملیاں بھی بڑی تعداد میں آتی ہیں لہذا میں اس تاثر کی نفی کرتا ہوں کہ فیملیاں سٹیج کا رخ کرنا چھوڑ گئی ہیں. نسیم وکی نے ماں دا لاڈلا فلم کے حوالے سے کہا کہ اس فلم میں کام کرنے کا بہت مزہ آیا . میں‌نے ہمیشہ کوشش کی ہے کہ میں ایسا کام کروں کہ جس سے پاکستانیوں کا سر فخر سے بلند ہو، میرے مداح اس فلم کو دیکھ کر یقینا بہت زیادہ خوش ہوں گے. قیصر پیا کی یقینا یہ پہلی انڈین پنجابی فلم ہے انہوں نے بھی فلم میں بہت اچھا کردار ادا کیا ہے.